وزیراعظم آفس کا افسر بن کر لوگوں کو لوٹنے والا نوسرباز پکڑا گیا

وزیراعظم آفس کا افسر بن کر لوگوں کو لوٹنے والا نوسرباز پکڑا گیا
وزیراعظم آفس کا افسر بن کر لوگوں کو لوٹنے والا نوسرباز پکڑا گیا

  

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) فیڈرل انویسٹی گیشن ایجنسی (ایف آئی اے)نے اسلام آباد سے وزیراعظم ہاﺅس کا آفیسر بن کر لوگوں کو لوٹنے والا نوسرباز گرفتار کر لیا۔ ویب سائٹ پرو پاکستانی کے مطابق اس نوسرباز کا نام مصطفی انصاری ہے، جو لوگوں کو اپنا تعارف وزیراعظم ہاﺅس میں تعینات آفیسر کے طور پر کراتا تھا۔ اس نے اس عہدے کے متعلق جعلی شناختی دستاویزات بھی بنا رکھی تھیں۔ 

نوسرباز لوگوں سے رقم لیتا اور انہیں گاڑیوں کی سبز نمبر پلیٹوں کے لیے جعلی ’نو آبجیکشن سرٹیفکیٹ‘ (این او سی)جاری کیا کرتا تھا۔ ایف آئی اے نے اس کے قبضے سے آفیشل دستاویزات بھی برآمد کیں۔ایف آئی اے حکام کے مطابق ملزم نے خود کو ایک خودساختہ پارٹی کا چیئرمین بھی بنا رکھا تھا اور لوگوں کو اس حوالے سے بھی اپنا تعارف کراتا تھا۔ اس نے پارٹی کا نام ’نیشنل پیس کونسل برائے بین المذاہب ہم آہنگی‘ رکھا ہوا تھا۔ وہ اس پارٹی کی ممبرشپ کے عوض بھی لوگوں سے رقم بٹورتا تھا۔ اس نے اس پارٹی کی ایک ویب سائٹ بھی بنا رکھی تھی جو اب پی ٹی اے کی طرف سے بلاک کی جا چکی ہے۔

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -