لاہورمیں معصوم بچی سے بداخلاقی کی رپورٹ آئی جی پنجاب نے سپریم کورٹ میں جمع کرادی

لاہورمیں معصوم بچی سے بداخلاقی کی رپورٹ آئی جی پنجاب نے سپریم کورٹ میں جمع ...
لاہورمیں معصوم بچی سے بداخلاقی کی رپورٹ آئی جی پنجاب نے سپریم کورٹ میں جمع کرادی

  


لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک)لاہور میں پانچ سالہ بچی سے جنسی بداخلاقی کے واقعہ کی رپورٹ آئی جی پنجاب نے سپریم کورٹ میں جمع کرا دی ہے جو رجسٹرار چیف جسٹس کو پیش کریں گے ۔ چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس افتخار محمد چوہدری نے لاہور میں 5 سالہ بچی سے زیادتی کے واقعہ پر ازخود نوٹس لیتے ہوئے آئی جی پنجاب سے واقعہ کی رپورٹ طلب کی تھی۔ چیف جسٹس نے آئی جی پنجاب کو حکم دیا تھاکہ وہ آج صبح 8 بجے تک زیادتی کے واقعہ اور اب تک کی تحقیقات سے متعلق رپورٹ پیش کریں جس کے بعد رپورٹ آئی جی پنجاب نے آج صبح سپریم کورٹ میں جمع کرا دی ۔رپورٹ رجسٹرار آفس میں جمع کرائی گئی اور رجسٹرار آفس سے رپورٹ مناسب حکم کے لیے چیف جسٹس کو بھجوا دی گئی ہے۔ دوصفحات پر مشتمل رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ سی سی ٹی وی ویڈیو کے مطابق بچی کو تشویش ناک حالت میں ہسپتال کے باہرچھوڑا گیا اور میڈیکل رپورٹ سے بچی کے ساتھ زیادتی ثابت ہوئی ہے۔ رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ ملزم کی گرفتاری کے لیے دو ٹیمیں تشکیل دے دی گئی ہے۔ ایک ٹیم ایس پی سول لائنز اور دوسری ٹیم ایس پی سی آئی اے کی سربراہی میں تشکیل دی گئی ہے،ملزم کی اب تک شناخت نہیں ہوسکی ہے۔علاج کے بعد اب بچی کی حالت بہترہے۔

مزید : لاہور /اہم خبریں


loading...