اپ رائٹ انجینئرز لمیٹڈ کی جائیداد نیلام کرنے کاحکم دے دیا گیا

اپ رائٹ انجینئرز لمیٹڈ کی جائیداد نیلام کرنے کاحکم دے دیا گیا

  

لاہور(نامہ نگار)بینکنگ عدالت نے یو بی ایل ڈیفالٹر اپ رائٹ انجینئرز پرائیویٹ لمیٹڈ کی ہاسپیٹلٹی ان کے عقب میں واقع 63مرلے کی جائیداد 16اکتوبر کو نیلام کرنے کاحکم دے دیا ہے۔جج محسن رضا خان نے یونائیٹڈ بینک لمیٹڈ کی درخواست پر سماعت کی، بینک کے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ اپ رائٹ انجینئرز پرائیویٹ لمیٹڈ کے ڈائریکٹرز جاوید اختر ، عمران جاوید، ضرار منظور، محمد اکرم اور ذوالفقار علی نے کاروبار کے لئے ہاسپیٹلٹی ان کے عقب میں 63مرلے پر مشتمل 6 پلاٹ رہن رکھوا کر بینک سے قرض حاصل کیا، انہوں نے مزید موقف اختیار کیا کہ ڈیفالٹر اپ رائٹ انجینئرز نے قرض کی رقم بروقت ادا نہیں کی جس پر ڈیفالٹر کمپنی کے خلاف 2015سے انہتر لاکھ 99ہزار روپے کی ڈگری جاری ہوچکی ہے جبکہ ڈیفالٹر کمپنی نے عدالتی ڈگری کے بعد 20لاکھ روپے کی رقم ادا کر دی ہے۔

مگر ڈگری کی بقایا رقم 49لاکھ 99ہزار روپے ادا نہیں کئے جا رہے لہٰذا رقم کی ریکوری کے لئے نادہندہ کی جائیداد نیلامی کا حکم دیا جائے،عدالتی حکم پر کورٹ آکشنرز نے اپ رائٹ انجینئرز پرائیویٹ لمیٹڈ کی جائیداد نیلامی کا شیڈول اور تخمینہ رپورٹ پیش کی جس پر عدالت نے فریقین کے دلائل اور اعتراضات سننے کے بعد مذکورہ بالا احکامات جاری کردیئے ہیں۔

مزید :

علاقائی -