سندھ حکومت کا اساتذہ پر وحشیانہ تشددقابل مذمت ہے،طارق نذیر

سندھ حکومت کا اساتذہ پر وحشیانہ تشددقابل مذمت ہے،طارق نذیر

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر)پاکستان مسلم لیگ (ن) کے سینئر رہنما خواجہ طارق نذیر نے کہاہے کہ کراچی میں اساتذہ پر وحشیانہ تشدد جمہوریت کے دعوے داروں کے منہ پر طمانچہ ہے۔پیسے لے کر اساتذہ کو بھرتی کرنے والے حکمران تنخواہیں مانگنے پر ظلم و زیادتی کرکے اساتذہ کو مطالبات سے دستبردار ہونے پر زور دے رہے ہیں۔پیپلزپارٹی کا اصل چہرہ کھل کر عوام سامنے آگیا ہے ۔اساتذہ پر پولیس کی گردی کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے ۔ا ن خیالات کا اظہارانہوں نے بدھ کو مسلم رہنماؤں زاہد شاہ میر،سید نصیراحمد،ایڈیشنل سیکرٹری سہیل ندیم ، نورخان اخوندزادہ ،سید خالد زیدی اور میڈیاکوآرڈی نیٹرعبدالحمیدبٹ سے ملاقات کے دوران کیا۔خواجہ طارق نذیر نے کہا کہ دنیا بھر میں اساتذہ میں انتہائی احترام کا درجہ دیا جاتا ہے اور ان کو تمام سہولتیں میسر ہوتی ہیں ۔ہمارے معاشرے میں بھی استاد کو باپ کا درجہ حاصل ہے لیکن سندھ کے بے حس حکمرانوں نے تنخواہ مانگنے والے اساتذہ پر لاٹھی چارج اور تشدد کرواکر اپنے عزائم واضح کردیئے ہیں۔ حکمرانوں نے بدترین آمریت کے دور کی یاد تازہ کرکے انسانی حقوق کی خلاف ورزی کی ہے جس سے سندھ حکومت کا حقیقی چہرہ عوام کے سامنے آ گیا ہے ۔انہوں نے کہا کہ پیپلزپارٹی پہلے ہی سندھ کے تمام اداروں کو برباد کرچکی ہے اور اب اساتذہ کو بھی ان کے جائز حقوق سے محروم کیا جارہا ہے ۔احتجاج کرنے والے اساتذہ کو سندھ حکومت کے بھاری رشوت کے عوض بھرتی کیا تھا اور اب جب یہ تنخواہ کامطالبہ کررہے ہیں تو ان پر تشدد کیا جارہا ہے ۔انہوں نے کہا کہ سندھ میں تعلیمی نظام برباد ہوگیا ہے اور نوجوانوں کا مستقبل تباہ ہورہا ہے ۔انہوں نے کہا کہ اساتذہ پر تشد د کروانے سندھ کے حکمران جان لیں کہ ان کے اقتدار کے دن بہت کم رہ گئے ہیں ۔انتخابات میں انعقاد قریب ہے اور سندھ کے عوام اپنے ساتھ ہونے والی زیادتیوں کا بدلہ ضرور لیں گے ۔صوبے کو کھنڈر بنانے والی پیپلزپارٹی کو پنجاب میں میاں شہباز شریف کی حکومت سے سبق سیکھنا چاہیے جنہوں نے ہر شعبے میں اصلاحات کرکے پنجاب کو ایک مثالی صوبہ بنادیا ہے ۔سندھ کے عوام کی نظریں بھی اب مسلم لیگ (ن) کی طرف مرکوز ہیں اور آئندہ عام انتخابات میں ملک بھر کی طرح سندھ سے بھی مسلم لیگ (ن)بھرپور کامیابی حاصل کرے گی ۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -