لداخ میں چین اور بھارت کے درمیان4ماہ سے کشیدگی برقرار

لداخ میں چین اور بھارت کے درمیان4ماہ سے کشیدگی برقرار

  

نئی دہلی(این این آئی) بھارتی ذرائع ابلاغ کے بتایا کہ چین نے مشرقی لداخ میں پینگونگ سو کے جنوبی حصے میں اسپینگور گیپ پر بھارتی فوج سے محض رائفل فائرنگ کی رینج پر ہزاروں فوجیوں، ٹینکوں اورتوپخانوں کو متحرک کیا ہے۔کشمیرمیڈیاسروس کے مطابق چین کی پیپلز لبریشن آرمی نے 30 اگست سے گورنگ پہاڑی اورمگر پہاڑی کے درمیان میں اپنے فوجی تعینات کئے جب بھارتی فوج نے لائن آف ایکچول کنٹرول پر چوشل کے قریب پینگونگ سو کے جنوبی کنارے کی رج لائن پراہم بلندیوں پر قبضہ کرنے کی کوشش کی۔ چین کی پیپلز لبریشن آرمی کے دستوں اور ہتھیاروں کی نقل و حرکت کو دیکھ کر بھارتی فوج نے بھی میں اپنے فوجی تعینات کئے۔دونوں ممالک کی فوجیں ایکدوسرے کی فائرنگ رینج میں ہیں۔بھارت اور چین مشرقی لداخ میں ایل اے سی پر چار ماہ طویل محاذآرائی میں مصروف ہیں۔ کئی سطح پر بات چیت کے باوجود کوئی پیش رفت نہیں ہوسکی اور تعطل جاری ہے۔

 کشیدگی برقرار

مزید :

صفحہ آخر -