کراچی میں قائم غیر قانونی تجاوزات کی وجہ سے حادثات رونما ہو رہے ہیں 

  کراچی میں قائم غیر قانونی تجاوزات کی وجہ سے حادثات رونما ہو رہے ہیں 

  

 کراچی(این این آئی)لیاری کوئلہ گودام کے قریب بلڈنگ گرنے کے واقعہ پر پی ٹی آئی رہنما و پارلیمانی لیڈرحلیم عادل شیخ جائے وقوعہ پر پہنچ گئے اس موقع پر انہوں نے متاثرین سے ملاقات کر کے تفصیلات معلوم کیں اور ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے ہر ممکن مدد کرنے کی یقین دھانی کرائی۔ اس موقع پر میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے حلیم عادل شیخ نے کہا کراچی میں ناجائز تجاوزات بنائی گئی ہیں جس کی وجہ سے حادثات رونما ہورہے ہیں بغیر ڈسٹرکٹ ایڈمنسٹریشن ایس بی سی اے کی اجازت کے کوئی بلڈنگ نہیں بنائی جاتی  12 سالوں سے کراچی میں غیر قانونی تجاوزات قائم کی جارہی ہیں کوئی روکنے والا نہیں سندھ حکومت جعلی تعمیرات کرانے والوں کہ سرپرستی کر رہی ہے جنہوں نے بھی یہ غیر قانونی تجاوزات کی ہیں ان کے خلاف کارروائی کی جائے بڑی بڑی بیس منزلہ عمارتیں رشوت دیکر بنائی جاتی ہیں کوئی پوچھنے والا نہیں غیر قانونی تعمیرات چائنا کٹنگ میں کوئی بھی افسر یا پارٹی ملوث ہو کارروائی کی جائے نیب تحقیقات کرائے کس طرح ایس پی ایس سے نے ایسی عمارتیں بنانے دی؎ ہیں۔ حلیم عادل شیخ نے مزید کہاکہ  میں شکر گذار ہوں صدر مملکت و گورنر سندھ کا جنہوں نے سیلاب متاثرین کا درد سمجھا اور امداد کی۔ مدادی سامان کی تقسیم گزشتہ ایک ہفتے سے جاری ہے میں خود  گراؤنڈ پر موجود ہوں۔ بلاول نے گزشتہ روز کہا کہ راشن تقسیم کرنے سے کچھ نہیں ہوگا۔ بلاول کو معلوم نہیں غریب سیلاب متاثرین کے پاس دو وقت کی روٹی کی کتنی اہمیت ہے بلاول سے کہوں گا راشن سے پیٹ بھرتا ہے بھاشن سے نہیں۔  پچھلے چھ دن سے بلاول و سندھ حکومت کے سیلاب متاثرین کے دورے کر رہے ہیں وفاق کے خلاف بھاشن دینے کے بجائے متاثرین کو راشن دیا جاتا تو متاثرین کی تکلیف کم ہوجاتی۔ بلاول سندھ حکومت کی نااہلی چھپانے کے لئے وفاق پر تنقید کر رہے ہیں  18ویں ترمین کے بعد تمام تر ذمہ داری سندھ حکومت کی ہے۔ سیلاب متاثرہ علاقوں میں ایک لاکھ راشن بیگ گورنر پنجاب و گورنر سندھ کی جانب سے تقسیم کیے جارہے ہیں  ٹینٹ این ڈی ایم اے کی جانب سے دیئے جارہے ہیں  دس ہزار راشن بیگ و دیگر سامان یو اے ای کے شیخ خلیفہ  بن زاید النہیاں فاؤنڈیشن کی جانب سے تقسیم کیا جارہا ہے۔ تمام سامان بغیر کسی تفریق کے سیلاب متاثرین میں تقسیم کیا جارہا ہے  وفاق نے کرونا وبا میں بھی سندھ کی عوام کو اکیلا نہیں چھوڑا سندھ کی عوام میں ساٹھ ارب روپے تقسیم کئے گئے اب بھی مزید وفاق متاثرین کی مدد کرے گا۔ بلاول کو اب ہیلی کاپٹر سے اتر کر عوام میں جانا چاہئے اور امداد کرنی چاہیے۔

حلیم عادل شیخ 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -