قاری حنیف جالندھری کی مولانا خالد محمود ضیاء‘ عمر فاروق سیال سے ملاقات

  قاری حنیف جالندھری کی مولانا خالد محمود ضیاء‘ عمر فاروق سیال سے ملاقات

  

خان گڑھ(نمائندہ پاکستان) علماء انبیاء کرام کے وارث ہیں اور دینی خدمات سر انجام دے رہے ہیں علماء کو چاہئیے کہ وہ  اپنا (بقیہ نمبر21صفحہ6پر)

تعلق کسی اللہ والے سے  جوڑ کر اسکی رہنما ئی میں دعوت و تبلیغ کا کام کریں اس سے انکے کام برکت ہوگی اور ہر طرح کی پریشانی سے محفوظ رہیں گے ان خیالات کااظہاروفاق المدارس العربیہ پاکستان کے ناظم اعلی مولانا قاری محمد حنیف جالندھری نے مولانا خالدمحمودضیاء،مولانا محمد طیب قریشی،مولانا محمد عمر فاروق سیال  ودیگر فضلاء خیر المدارس سے ملاقات کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کیا اور کہا سچوں کیساتھ رہو سچے لوگ قیامت تک باقی رہیں گے اور کہا  تصنیف،تدریس،خطابت،افتاء  قرآن پاک پڑھنا،پڑھانااور انسانیت کی خدمت کرنا، شریعت کے احکام سیکھنا، سیکھانادعوت تبلیغ ہی ہے اور کہا معاشرتی مسائل رشوت، سود دوکھا،لوگوں کا فٹ پاتھ پر سامان رکھنا وغیرہ کے دنیوی، آخروی نقصانات سے لوگوں کو آگاہ کریں  عقائد، نظریات کی حفاظت کریں عوامی خدمت مین دینی جذبہ سے سر شار ہوکر حصہ لیں  اورکہا  حقوق اللہ اور حقوق العباد کی اہمیت کو اجاگر کریں اور کہا فرقہ وارانہ منافرت، شدت پسندی،جذبات سے دور رہیں قانون کے دائرے میں رہتے ہوئے مدلل گفتگو کریں  مظلوم کی مدد کریں، مسجد کے کردار کو فعال کریں، دلیل سے بات کریں، درس قرآن،درس حدیث کا اہتمام کریں فتنوں پر نظر رکھیں خود بھی اور دوسروں کو بھی فتنوں سے بچانے کی کوشش جاری رکھیں۔

گفتگو

مزید :

ملتان صفحہ آخر -