موٹروے کیس، دیپالپور سے گرفتار ہونے والے ملزم شفقت نے اعتراف جر م کر لیا ، دنیا نیوز کا دعویٰ 

موٹروے کیس، دیپالپور سے گرفتار ہونے والے ملزم شفقت نے اعتراف جر م کر لیا ، ...
موٹروے کیس، دیپالپور سے گرفتار ہونے والے ملزم شفقت نے اعتراف جر م کر لیا ، دنیا نیوز کا دعویٰ 

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن )نجی ٹی وی دنیا نیوز نے پولیس ذرائع کے حوالے سے دعویٰ کیاہے کہ وقارالحسن کی نشاندہی پر گرفتار ہونے والے ملزم شفقت نے تحقیقات کے دوران اپنے جرم کا اعتراف کر لیاہے ۔

تفصیلات کے مطابق ملزم شفقت نے موٹر وے پر خاتون کے ساتھ ڈکیتی اور پھر بچوں کے سامنے قبیح فعل کا اعتراف کر لیاہے اور تصدیق کر دی ہے کہ اس کے ساتھ دوسرا مرکزی ملزم عابد ملہی ہی ہے ۔ شفقت کی عمر 23 سال بتائی جارہی ہے اور مزید تفصیلات یہ سامنے آئی ہیں کہ اس کا تعلق بہاولنگر کی تحصیل ہارون آباد سے ہے ۔ شفقت نے اعتراف کیا کہ وہ گزشتہ چار سال سے عابد کے ساتھ ہی ہے اور وہ دونوں مل کر ہی وارداتیں کرتے رہے ہیں ۔

اس سے قبل نجی ٹی وی دنیا نیوز نے ذرائع کے حوالے سے دعویٰ کیا تھا کہ ملزم شفقت کو گزشتہ روز دیپالپور سے گرفتار کیا گیا تھا اور اس کا ڈی این اے بھی میچ کر گیاہے ۔شفقت نے اعتراف کرتے ہوئے کہا کہ بہاولنگر میں ان کا پورا گینگ تھا جس کے ساتھ مل کر وہ اور عابد کارروائیاں کیا کرتے تھے۔ نجی ٹی وی کا کہناتھا کہ وقار الحسن نے تحیققات کے دوران بتایا کہ شفقت اوکاڑہ کی کسی تحصیل میں چھپا ہوا ہے جس کے بعد پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے اس کا پتا لگایا اور گرفتار کیا۔

یاد رہے کہ پولیس کی جانب سے تصویر اور اطلاع دینے والے کیلئے انعامی رقم کا اعلان ہوا تو گزشتہ روز وقار الحسن نے تھانہ سی آئی اے ماڈل ٹاون میں از خود گرفتاری پیش کی اور صحت جرم سے انکار کرتے ہوئے اپنا ڈی این اے کروانے کا مطالبہ کیا ۔ پولیس کی جانب سے ملزم شفقت کا ڈی این اے کروایا گیا جو کہ میچ نہیں ہواہے جبکہ خاتون نے بھی وقار الحسن کو پہنچاننے سے انکار کیا تھا۔

وقار الحسن نے دوران تفتیش اپنے برادر نسبتی عباس اور شفقت کا نام لیا تھا تاہم آج صبح عباس نے شیخو پورہ پولیس کو اپنی گرفتاری پیش کر دی تھی اور کہا تھا کہ وہ عابد علی کو کام کے حوالے سے ہی جانتا اور رابطہ ہو تا تھا ،آخری مرتبہ اس سے رابطہ 12 دن پہلے ہوا تھا ، وہ سٹیل مل میں کام کرتے تھے اور آخری رابطے میں بھی کام کے حوالے سے ہی بات ہوئی تھی ۔

پولیس نے وقار ارلحسن کی جانب سے نشاندہی کے بعد ملزم شفقت کو دیپالپور سے گرفتار کیا اور پھر اس کا ڈی این اے کروایا جو کہ میچ کر گیا ہے جبکہ ملزم نے اعتراف جرم بھی کر لیا ہے ۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -