ٹریول ٹریڈ کو ریلیف دینے کی بجائے پراپرٹی ٹیکس کے چالان جاری 

ٹریول ٹریڈ کو ریلیف دینے کی بجائے پراپرٹی ٹیکس کے چالان جاری 

  

لاہور(ڈویلپمنٹ سیل)دو سال سے عمرہ و حج کے ساتھ فلائٹس آپریشن معطل، بدترین بحران کے باوجود پنجاب حکومت نے ٹریول ٹریڈ کو ریلیف دینے کی بجائے گزشتہ سال سے ڈبل ٹرپل پراپرٹی ٹیکس کے چالان جاری کر دیئے۔ 2020ء میں جو ٹیکس ایک دفتر کا 42سو تھا اس سال 12ہزار 800روپے جاری کیا گیا ہے، دلچسپ امر یہ ہے حج عمرہ بند ہونے کی وجہ سے کرائے والے سینکڑوں دفاتر بند اور ہزاروں افراد بے روزگار ہو چکے ہیں کئی گنا زیادہ پراپرٹی کے چالان بھیجنے پر ہوپ پنجاب کے ایگزیکٹو ممبر امتیاز الرحمن، چودھری سعید احمد ملک اور حافظ شفیق کاشف نے شدید ردعمل دیتے ہوئے وزیراعلیٰ پنجاب سے نوٹس لینے اور پراپرٹی ٹیکس کے نوٹسز واپس لینے کا مطالبہ کیا ہے ہوپ کے قائدین نے کہا ہے کہ کورونا کی وجہ سے دو سال سے عمرہ اور حج بند ہے کووڈ19کی وجہ سے ٹریول عمرہ حج ٹریڈ سب سے زیادہ متاثر ہوئیں ہیں۔ وزیراعظم مداخلت کریں اور ہزاروں افراد کو بے روزگاری سے بچائیں۔ پراپرٹی ٹیکس، پروفیشنل ٹیکس، انکم ٹیکس ٹورازم ٹیکس کم از کم دو سال کے لئے معاف کریں تاکہ ٹریڈ بحران پر قابو پایا جا سکے۔

 پراپرٹی ٹیکس

مزید :

صفحہ آخر -