اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کا اجلاس، شہباز شریف کس ہوٹل میں قیام کریں گے؟

اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کا اجلاس، شہباز شریف کس ہوٹل میں قیام کریں گے؟
اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کا اجلاس، شہباز شریف کس ہوٹل میں قیام کریں گے؟

  

نیویارک (طاہر محمود چوہدری سے ) وزیراعظم پاکستان  شہباز شریف نیویارک میں  اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی سے خطاب کے علاوہ سائیڈ لائن پر متعدد عالمی رہنماؤں سے ملاقاتیں کریں گے جنہیں نیویارک میں پاکستان مشن حتمی شکل دے رہا ہے. وزیراعظم 19 ستمبر کو نیویارک پہنچیں گے اور20 ستمبر کو جنرل اسمبلی کے افتتاحی اجلاس میں شرکت بھی کریں گے. افتتاحی اجلاس کے پہلے روایتی مقرر  برازیل کے صدر ہوں گے جبکہ جنرل اسمبلی سے دوسری تقریر امریکی صدر جو بائیڈن  کی ہو گی.

وزیراعظم شہباز شریف اس بار اقوام متحدہ کی بلڈنگ کے بالمقابل پلازہ ہوٹل میں قیام کریں گے. وزیراعظم سمیت ان کے وفد کے اراکین کے لیے کمرے بک کروا لیے گئے ہیں. معلوم ہوا ہے کہ وزیراعظم کے ساتھ آنے والا وفد ان کے پروٹوکول اور سیکیورٹی سٹاف کے علاوہ انتہائی مختصر ہو گا. سیکریٹری خارجہ، وزیر اطلاعات مریم اورنگ زیب کے علاوہ5 سے6دیگر وزراء کی آمد متوقع ہے. 

جنرل اسمبلی سے  شہباز شریف کا خطاب 23 ستمبر، بروز جمعہ امریکی وقت کے مطابق 3 سے 4 بجے سہ پہر ہوگا. یہ  شہباز شریف کا بطور وزیر اعظم جنرل اسمبلی سے پہلا خطاب ہو گا. جمعہ کو خطاب کرنے والے ممالک میں پاکستان کا نمبر 14 واں ہے. پاکستان سے پہلے نیوزی لینڈ کی وزیر اعظم اور پاکستان کے بعد کمبوڈیا کے صدر خطاب کریں گے.

سفارتی ذرائع کے مطابق میاں شہباز اپنی تقریر میں پاکستان میں سیلاب کی تباہ کاریوں سے ہونے والے نقصانات، یو این سیکریٹری جنرل کا پاکستان دورہ  اور ان کی جانب سے سیلاب زدگان کی امداد کے لیے فلیش اپیل سمیت کلائمیٹ چینج، موسمیاتی تبدیلیوں کے مستقبل میں اثرات کا تفصیلی احاطہ کریں گے. اس کے علاوہ افغانستان اور مسئلہ کشمیر کے حوالے سے بھارتی مظالم سے اقوام عالم کو آگاہ کریں گے. اس بار بھی بھارتی وزیراعظم نریندر مودی اقوام متحدہ کے اجلاس میں شرکت نہیں کر رہے. بھارت کی نمائندگی ان کے وزیر خارجہ کریں گے. 

پاکستان مشن برائے اقوام متحدہ نیویارک میں تعینات پریس قونصلر ڈاکٹر مریم شیخ نے "روزنامہ پاکستان" سے خصوصی گفتگو میں بتایا کہ نیویارک میں وزیراعظم  شہباز شریف کی زیادہ تر مصروفیات اقوام متحدہ بلڈنگ کے اندر ہی ہوں گی. 23 ستمبر کو جنرل اسمبلی سے خطاب کے علاوہ وزیراعظم کی عالمی لیڈروں سے  دو طرفہ ملاقاتیں اور سائیڈ ایونٹس بھی اقوام متحدہ میں ہی شیڈول کیے گئے ہیں. وزیراعظم شہباز شریف اور وزیر خارجہ بلاول بھٹو زرداری یو این میڈیا سنٹر میں ایک پریس بھی بریفنگ کریں گے، جہاں وہ صحافیوں کے سوالات کے جواب دیں گے.

ان کا مزید کہنا تھا کہ اقوام متحدہ کی جولائی میں طے ہونے والی پالیسی کے مطابق اس بار صرف اقوام متحدہ کے ریزیڈنٹ اور لانگ ٹرم  میڈیا پاس رکھنے والے صحافیوں کو ہی اقوام متحدہ بلڈنگ میں داخلے کی اجازت ہو گی. اپنے طور پر یا وزیراعظم   کے وفد کے ساتھ آنے والے صحافی نئے میڈیا پاس ایشو نہ ہونے کی وجہ سے اس بار اقوام متحدہ بلڈنگ میں نہیں جا سکیں گے.

مزید :

قومی -اہم خبریں -