رحمان ملک کا برطانوی ہائی کمشنر کو خط،برطانوی حکام نے ایم کیو ایم اور را کے معاملے میں کبھی بریفنگ نہیں دی، شہریار نیازی کے الزامات بے بنیاد قرار

رحمان ملک کا برطانوی ہائی کمشنر کو خط،برطانوی حکام نے ایم کیو ایم اور را کے ...
رحمان ملک کا برطانوی ہائی کمشنر کو خط،برطانوی حکام نے ایم کیو ایم اور را کے معاملے میں کبھی بریفنگ نہیں دی، شہریار نیازی کے الزامات بے بنیاد قرار

  



اسلام آباد( مانیٹرنگ ڈیسک) سینیٹر رحمان ملک نے شہریار نیازی کی طرف سے عائد کئے گئے الزامات کی تردید کر دی ہے ان کا کہنا ہے کہ شہریار نیازی کے لگائے گئے الزامات بے بنیاد ہیں ، انہیں برطانوی حکام نے ایم کیو ایم اور را کے معاملے پر کبھی بریف نہیں کیا، برطانوی ہائی کمشنر کو خط لکھ کر خود کو احتساب کیلئے پیش کردیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق سینیٹر رحمان ملک کا کہنا ہے کہ آج کل الزمات کا موسم ہے،کوئی نیازی ہیں وہ مجھ پر الزام لگا رہے ہیں،شہریار نیازی کہتے ہیں حکومت برطانیہ نے مجھ ایم کیو ایم اور را پر بریفنگ دی تھی ۔ شہریار نیازی کی جانب سے عائد کردہ الزمات پر رد عمل ظاہر کرتے ہوئے سینیٹر رحمان ملک کا کہنا ہے کہ برطانوی حکام نے مجھے ایم کیو ایم اور را کے معاملے پر کبھی بریف نہیں کیا،بریفنگ میں صرف واجد شمس الحسن تھے۔میں آج تک شہریار نیازی سے نہیں ملا، صرف تصویر دیکھی ہے۔قانونی ماہر سے مشورہ کرکے برطانوی ہائی کمشنر کو خط لکھا ہے،شہریار نیازی بھی برطانوی حکومت کو خط لکھ کر پوچھ لیں،تھریسامے، برطانوی ہوم ڈیپارٹمنٹ سے پوچھ کر بتایا جائے مجھ کیا بریفنگ دی گئی تھی۔

رحمان ملک کا کہنا ہے کہ محترمہ بینظیر اور میری کمپنی یو اے ای میں رجسٹرتھی، پانامہ لیکس سے تعلق نہیں ہے ۔لیڈرز اور پارٹیز سمیت ہر ایک کا احتساب ہونا چاہئے۔میں نے آنکھیں نہیں چرائیں خط لکھ کر خود کو احتساب کیلئے پیش کردیاہے۔جرم کرنے والے کو سزا ملنی چاہئے۔

عمران فاروق قتل کیس کے حوالے سے بات کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ مصطفی کمال بھی برطانوی حکام کو خط لکھیں،عمران فاروق قتل کیس میں مجھے کچھ بتایا گیا ہے تو برطانوی حکام یہ بھی بتائیں گے۔

مزید : اسلام آباد


loading...