پاکستان سے حلال گوشت کی برآمدات کے وسیع امکانات ہیں

پاکستان سے حلال گوشت کی برآمدات کے وسیع امکانات ہیں

  



 لاہور( این این آئی )یو ایس ایڈ مشن کے ڈائریکٹر جان گروکے نے کہا ہے کہ پاکستان سے حلال گوشت کے دنیا بھر میں ایکسپورٹ کے وسیع امکانات موجود ہیں ،دنیا بھر میں حلال گوشت کی موجودہ تجارت کا حجم اس وقت650ارب ڈالرز کے لگ بھگ ہے ،ایگریکلچرل مارکیٹ ڈیویلپمنٹ کے ذریعے پاکستان اور امریکہ دونوں ممالک پاکستان کی زرعی مصنوعات کی مقامی و بین الاقوامی فروخت میں اضافے کیلئے تعاون کررہے ہیں۔یونائیٹڈ اسٹیٹ ایجنسی فار انٹر نیشنل ڈیویلپمنٹ (یو ایس ایڈ) کی جانب سے ایک عشائیہ کا اہتمام کیا گیا جس کا مقصد پاکستان کو معیاری حلال گوشت اور سبزیوں کے حوالے سے علاقائی و عالمی حب کے طور پر پیش کرنا تھا۔اس عشائیہ میں حلال فوڈ انڈسٹری سے وابستہ افراد کی بڑی تعداد نے شرکت کی جبکہ اس موقع پر پانچویں عالمی حلال کانفرنس و نمائش کا بھی اہتمام کیا گیا تھا جس میں پاکستان حلال اتھارٹی ایکٹ2015کے بعد سے مقامی حلال انڈسٹری کی جانب سے حاصل کئے گئے اہداف کو اجاگر کیا گیا ۔اس عشائیہ کا اہتمام پنجاب حلال ڈیویلپمنٹ اتھارٹی اور وزارت سائنس و ٹیکنالوجی نے یو ایس ایڈ کے تعاون اور ایگریکلچرل مارکیٹ ڈیولپمنٹ کے اشتراک سے کیا تھا۔اس موقع پریو ایس ایڈ مشن کے ڈائریکٹر جان گروکے کا کہنا تھا کہ پاکستان سے حلال گوشت کے دنیا بھر میں ایکسپورٹ کے وسیع امکانات موجود ہیں اور دنیا بھر میں حلال گوشت کی موجودہ تجارت کا حجم اس وقت650ارب ڈالرز کے لگ بھگ ہے ،ایگریکلچرل مارکیٹ ڈیولپمنٹ کے ذریعے پاکستان اور امریکا دونوں ممالک پاکستان کی زرعی مصنوعات کی مقامی و بین الاقوامی فروخت میں اضافے کیلئے تعاون کررہے ہیں۔یو ایس ایڈ کی جانب سے ایگریکلچرل مارکیٹ ڈیولپمنٹ کیلئے امریکا و پاکستان کے تعاون پر مبنی یہ پروگرام فروری2015میں متعارف کرایا گیا تھا جس کا مقصد گوشت ،سبزیوں،آم اور سٹرس کی پیداوار اور فروخت میں اضافے کیلئے اقدامات کرنا تھا ،اس اشتراک کے ذریعے پاکستان سے زرعی مصنوعات کیلئے کسانوں،پروسیسرز،برآمد کنندگان اور خریداروں کے درمیان تعاون کو فروغ دینے پر اتفاق ظاہر کیا گیا تھا۔

مزید : کامرس


loading...