پانامہ لیکس، وزیراعظم کو فوری مستعفی ہوجانا چاہیے، نئے الیکشن کی ضرورت ہے:خالد احمد کھرل

پانامہ لیکس، وزیراعظم کو فوری مستعفی ہوجانا چاہیے، نئے الیکشن کی ضرورت ...

  



لاہور(انٹرویو: محمد نواز سنگرا) پانامہ لیکس میں نام آنے کے بعد وزیر اعظم نواز شریف کو فوراً استعفیٰ دے دینا چاہیے اور ملک میں نئے الیکشن کرانے کی ضرورت ہے۔پیپلزپارٹی سندھ اور مصطفی کمال کراچی تک محدود ہونگے ،وفاق میں آنے والی حکومت تحریک انصاف کی ہو گی۔خورشید شاہ کاغذی جب کہ عمران خان حقیقی اپوزیشن لیڈر ہیں۔ان خیالات کا اظہار سابق وفاقی وزیر خالد احمد کھرل نے ’’روز نامہ پاکستان ‘‘کوخصوصی انٹرویو دیتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہا کہ جب کسی ملک کے وزیر اعظم پر مالی بے ضابطگیوں کا سنگین الزا م ہوتو اس کا وزیر اعظم رہنا مشکل ہو جاتا ہے ۔نواز شریف پاکستان سے پیسہ نکال کر باہر رئیل اسٹیٹ بنا رہے ہیں ،ان کا یہ کہنا ہے بیرون ممالک ان کے بیٹوں کا کارروبار ہے کوئی بندہ ماننے کو تیار نہیں ہے۔نواز شریف کو فوراً استعفیٰ دے دینا چاہیے اور ملک میں الیکشن کا انعقاد ہونا چاہیے جس میں عوام نئی قیادت کو چنیں گے جو کہ عمران خان ہے جن کو عوام نے ابھی تک نہیں آزمایاجبکہ مسلم لیگ(ن)اور پیپلز پارٹی کی کارکردگی عوام سے ڈھکی چھپی نہیں ہے۔عوام اب مزید دھوکے میں نہیں آئیں گے۔تحریک انصاف کی خیبر پختونخواہ میں کارکردگی بہت اچھی ہے اور وفاق میں بھی حکومت بنا کر پی ٹی آئی ملک کو بحرانوں سے نکالے گی۔انہوں نے بتایا کہ میں نے تحریک انصاف میں باقاعدہ شمولیت اختیار کر لی ہے اور جب چئیرمین جاتی عمرامیں احتجاج کی کال دیں گے تو عوام کا جم غفیر ہو گا۔ایک سوال کے جواب میں کہا کہ شہباز شریف ایک انتہائی متحرک انسان ہے ،اگر موجودہ صورتحال کے پیش نظر شہباز شریف نواز شریف کی جگہ لیتے ہیں تو مسلم لیگ(ن) کا گراف مزید گر جائے گا اور آئندہ الیکشن میں پنجاب میں بھی ان کا نام ونشان نہیں ہو گا۔پانامہ لیکس میں نام آنے پر نواز شریف کی پوری دنیا میں بدنامی ہوئی اب ان کو استعفیٰ دے دینا چاہیے۔

مزید : صفحہ آخر


loading...