ٹرانسپورٹرز شدید مشکلات سے دوچار ہیں ،آل سرحد گڈز

ٹرانسپورٹرز شدید مشکلات سے دوچار ہیں ،آل سرحد گڈز

  



نوشہرہ(بیورورپورٹ) آل سرحد گڈز ٹرانسپورٹ اینڈ اڈہ اونر ز فیڈریشن خیبرپختونخوا کے صوبائی صدر لیاقت علی خان اور سینئرنائب صدر حاجی خیبرخان نے کہا ہے کہ علاقہ نندرک نوشہرہ میں معدنیات اور ایکسائز ٹیکس حکومت شیڈول سے دوسو فیصدزائد وصولی کی جارہی ہے اور رسید میں رقم درج نہیں کی جاتی جو کہ کرپشن کا کھلا ثبوت ہے حکومت ایک طرف تو کرپشن کے خاتمے اور تبدیلی کے نعرے لگارہی اور دوسری طرف غریبوں کو لوٹا جارہا ہے اگر تبدیلی ایسی ہو تو ایسی تبدیلی ہمیں نہیں چاہیے جو کہ گڈز ٹرانسپورٹروں کے ساتھ ظلم وانصافی ہے ان خیالات کااظہار انہوں نے نوشہرہ پریس کلب میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا مقررین نے کہا کہ انہوں نے کہا کہ ایک ٹرک سے تین قسم کے ٹیکس بغیرسرکاری شیڈول دوسوفیصد زائد لیاجاتا ہے جو کہ قانونی طریقہ کار کے خلاف ہے 10ویلر ٹرک سے 90روپے ٹیکس کی بجائے 500روپے ایکسائز کی مد میں 200روپے ٹی ایم اے ٹیکس اور 2000روپے لیز ٹیکس ٹوٹل 2700روپے وصول کئے جارہے ہیں جو سراسرظلم وزیادتی ہے اسی طرح پورے ضلع میں معدنیات کی آڑ میں گڈز ٹرانسپورٹروں کو لوٹاجارہا ہے کوئی پرسان حال نہیں حکومت کے کرپشن کے خاتمے کے دعوے دھرے کے دھرے رہ گئے انہوں نے کہا کہ پاکستان میں سب سے زیادہ ٹیکس دینے والے ٹرانسپورٹرز ہیں لیکن ٹیکس دینے کے باوجود مالکان اور ڈرائیوروں کو ہرجگہ پرتنگ کیاجاتا ہے اور کئی بار شدید تشدد کانشانہ بھی بنایاجاتا ہے انہوں نے کہاکہ کئی عرصے سے ہمارا مطالبہ ہے کہ ایکسائز اور معدنیات ٹیکس جو کہ مختلف علاقوں میں قائم کئے گئے ہیں شیڈول کے مطابق ٹیکس لینے کا مطالبہ کررہے ہیں لیکن باربار درخواستوں اور احتجاجوں کے باجود غنڈہ ٹیکس کا سلسلہ ختم نہیں کیاگیا جس سے ٹرانسپورٹرز شدید مشکلات کے شکار ہیں اگر ہمارے مطالبات منظور نہ کئے گئے توہم ٹرانسپورٹ کو مکمل طورپر بند کردیں گے اور جی ٹی روڈ پر غیرمعینہ مدت تک دھرنا دینے پر مجبور ہوجائیں گے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...