زیرتربیت انجینئرز کو بھرتی کرنے کی شرط پر کنسٹرکشن کمپنیوں کو لائسنس کی تجدید کا حق مل گیا

زیرتربیت انجینئرز کو بھرتی کرنے کی شرط پر کنسٹرکشن کمپنیوں کو لائسنس کی ...

  

لاہور(پ ر)پاکستان انجینئرنگ کونسل کی کنسٹرکشن انڈسٹری ریگولیشن کمیٹی(CIRC) نے کنسٹرکٹرز اور کنسٹرکشن کمپنیوں کے لائسنس کی تجدجد کیلئے سپر وائزری انجینئرز کو ملازمت دینے کی شرط سے استثناء دیتے ہوئے انہیں صرف ایک بیان حلفی کہ وہ زیر تربیت انجینئرز کو بھرتی کریں گے جمع کرانے پر لائسنس کی تجدید کا حق دے دیا ہے ۔کنسٹرکٹرزایسوسی ایشن پاکستان کے چیئرمین سکندر حیات خٹک نے اپنے ایک بیان میں اس فیصلہ کا خیر مقدم کرتے ہوئے امید کی ہے کہ اب کنسٹرکشن کمپنیوں کے پچھلے چار ماہ سے رکے ہوئے لائسنسز کی تجدید ہو جائیگی۔انہوں نے کہا کہ کنسٹرکٹر ز PEC لائسنس کیلئے عائد سپروائزری انجینئرز کی شرط کی وجہ سے کافی مشکلات کا شکار تھے اب کنسٹرکشن انڈسٹری ریگولیشن کمیٹی نے زیرتربیت انجینئرزکو رکھنے کی اجازت دے دی ہے۔

ان زیرتربیت انجینئرز(Internee Engineers) کو کنسٹرکشن کمپنیاں پانچ ہزار ماہانہ جبکہ باقی رقم حکومت ادا کرے گی۔سکندر حیات خٹک نے امید ظاہر کی کہ بیان حلفی کی شرط پر لائسنس کی تجدید کے حق کے بعد پاکستان انجینئرنگ کونسل جلد رکے ہوئے لائسنسز کی تجدید شروع کر دے گی۔

مزید :

کامرس -