تعلیمی اداروں میں منشیات کی مکمل ممانعت کو یقینی بنایا جائے گا،رانا مشہود

تعلیمی اداروں میں منشیات کی مکمل ممانعت کو یقینی بنایا جائے گا،رانا مشہود

لاہور(ایجوکیشن رپورٹر)ومت پنجاب کی جانب سے تعلیمی اداروں کو نشہ کی لعنت سے محفوظ رکھنے کی غرض سے تشکیل کردہ خصوصی کمیٹی کا دوسرااجلاس آج ڈائریکٹوریٹ آف سٹاف ڈویلپمنٹ میں صوبائی وزیر سکولز ایجو کیشن رانا مشہود احمد خاں کی زیر صدارت منعقد ہوا۔اجلاس میں صوبائی وزیر ہائر ایجوکیشن سید رضا علی گیلانی اوراینٹی نارکوٹکس فورس پنجاب کے ریجنل ڈائریکٹر کے علاوہ سکولز ایجوکیشن ، ہائر ایجوکیشن، سماجی بہبود ، ایکسائز اور پولیس کے نمائندوں نے شرکت کی۔اجلاس میں تعلیمی اداروں میں سگریٹ نوشی سمیت تمام نشوں کی مکمل ممانعت کو یقینی بنانے کے حوالے سے مختلف تجاویز پر غور کیا گیا۔اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے صوبائی وزیر رانا مشہود نے کہا کہ انسدادِ منشیات کے اقدامات پر عملدرآمد کے حوالے سے تعلیمی ادارے اپنے فوکل پرسنز مقرر کریں ۔اس حوالے سے زیرو ٹالرسنس کی پالیسی اپناتے ہوئے انفورسمنٹ کے ادارے مل کر کام کریں ۔

انہوں نے بتایا کہ تعلیمی اداروں کو نشہ سے پاک رکھنے کیلئے جامع پالیسی تشکیل دی جا رہی ہے۔جس کیلئے سفارشات مرتب کر کے وزیراعلیٰ پنجاب کو پیش کی جائیں گی۔صوبائی وزیر ہائر ایجوکیشن سید رضا علی گیلانی نے اجلاس کو بتایا کہ اعلیٰ تعلیم کے اداروں میں منشیات کے استعمال پر مکمل پابندی کو یقینی بنانے کے حوالے سے وائس چانسلرز کو ہدایات جاری کر دی گئی ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ نشہ استعمال کرنے والے طالبعلموں کی فوری تشخیص کیلئے میڈیکل آلات فراہم کئے جائیں گے۔ صوبہ پنجاب میں اعلیٰ تعلیم کے نجی اداروں سمیت وفاقی حکومت کی جامعات میں منشیات کی سختی سے ممانعت کو یقینی بنایا جائے گا۔اس حوالے سے والدین اور میڈیا سمیت علماء کرام کا فریضہ ہے کہ بچوں میں سگریٹ نوشی سمیت تمام نشوں سے نفرت اور حقارت کے جذبات اجاگر کئے جائیں۔اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ نشہ سے محفوظ معاشرے کے قیام کیلئے تمام متعلقہ محکمے اپنی حکمتِ عملی تیار کریں تا کہ صحت مند معاشرہ پروان چڑھانے میں مدد ملے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4