جے آئی یوتھ خیبر ایجنسی نے عوام میں کامیابی کے پنجے گاڑ دےئے

جے آئی یوتھ خیبر ایجنسی نے عوام میں کامیابی کے پنجے گاڑ دےئے

  

خیبر ایجنسی ( بیورورپورٹ)جے آئی یوتھ خیبر ایجنسی نے عوام میں کامیابی کے پنجے گاڑ دےئے ، بیس ہزار نوجوانوں کو ممبر شپ دی ہے ، دس ہزار نوجوانوں نے انٹرا پارٹی الیکشن میں حصہ لیکر ووٹ کاسٹ کیا ، 16 مارچ کو صوبے کی سطح پر گرینڈ یوتھ کنونشن کرینگے جس سے امیر جماعت اسلامی سراج الحق خطاب کرینگے ، جے آئی یوتھ خیبر کے صدر ضیاء الحق آفریدی کی لنڈی کوتل میں پریس کانفرنس ۔ جماعت اسلامی یوتھ خیبر ایجنسی کے صدر ضیاء الحق آفریدی نے لنڈی کوتل پریس کلب میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے ہوئے کہ خیبر ایجنسی میں فاٹا اور صوبے کے دیگر علاقوں کی طرح نوجوانوں کو بیدار، منظم اور بیدار کرنے کے لئے جے آئی یوتھ نے بہترین انداز میں تیز ترین مہم چلائی اور لاکھوں نوجوانوں کو جے آئی یوتھ کی ممبر شپ دی اور نوجوانوں کو بہتر مستقبل کے لئے نوجوان سے حکمران تک کا پیغام پہنچا دیا انہوں نے کہا کہ صوبے اور فاٹا میں دس لاکھ سے زیادہ نوجوانوں کو ممبر شپ دی اور ہزاروں نوجوانوں پر مشتمل منتخب کابینے وجود میں آگئیں اور 16 مارچ کو رینگ روڈ پشاور میں گرینڈ یوتھ کنوشن منعقد کرینگے جس میں دو لاکھ سے زیادہ نوجوان پورے صوبے اور فاٹا سے شرکت کرینگے ضیاء الحق آفریدی نے کہا کہ جماعت اسلامی پاکستان کے نوجوانوں کے بہتر مستقبل کے لئے ان کی تربیت کر کے ان کو با اختیار بنا نا چاہتی ہے تاکہ نوجوان ہی قوم اور ملک کے مسائل حل کر سکے انہوں نے کہا کہ لاکھوں نوجوانوں نے انٹرا پارٹی الیکشن میں حصہ لیا جن کی عمریں اٹھارہ اور پینتیس سال کے درمیان تھیں اور آئندہ انتخابات کے لئے پچاس فیصد پارٹی ٹکٹ بھی نوجوان قیادت کو ملیں گے انہوں نے کہا کہ فاٹا کے تمام علاقوں اور خیبر ایجنسی میں یوتھ کے شفاف انتخابات کئے گئے جس میں نوجوانوں نے بڑھ چڑھ کر حصہ لیا اور یہی نوجوان اپنے علاقوں میں بیداری کی تحریک چلائیں گے اور اپنے مسائل خو دحل کرینگے انہوں نے کہا کہ جماعت اسلامی واحد جماعت ہے جس کے پاس نوجوان قیادت اور نوجوانوں کی ایک بڑی کھیپ موجود ہے جو باصلاحیت اور تعلیم یافتہ ہیں انہوں نے کہا کہ گرینڈ یوتھ کنوشن میں لاکھوں نوجوانوں کو شریک کرینگے اور ان کی سہولت کے لئے ٹرانسپورٹ کا انتظام بھی کیا گیا ہے اور خیبر ایجنسی سے بھی ہزاروں نوجوان اس کنوشن میں شرکت کرینگے ۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -