”میں نے پہلی سنچری بنائی تو یونس خان نے ۔۔۔“ ٹیسٹ کرکٹر فواد عالم بھی میدان میں آ گئے

”میں نے پہلی سنچری بنائی تو یونس خان نے ۔۔۔“ ٹیسٹ کرکٹر فواد عالم بھی میدان ...
”میں نے پہلی سنچری بنائی تو یونس خان نے ۔۔۔“ ٹیسٹ کرکٹر فواد عالم بھی میدان میں آ گئے

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) ٹیسٹ کرکٹر فواڈ عالم نے اپنا کیرئیر سیاست کی بھینٹ چڑھنے کا شکوہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ ڈومیسٹک کرکٹ میں بہترین کاکردگی دکھانے والوں کو بلاتفریق مواقع ملنے چاہئیں۔ انہوں نے لیجنڈ کرکٹر یونس خان کی تعریف کرتے ہوئے ایسا واقعہ بھی سنایا جس سے یہ اندازہ ہوتا ہے کہ وہ جونیئرز کیلئے کتنی اہمیت رکھتے تھے۔

ٹروکالر کی نئی ایپلیکیشن متعارف، گوگل ڈو کیساتھ انضمام کا بھی اعلان

تفصیلات کے مطابق نجی ٹی وی کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے فواد خان نے کہا کہ مجھے پسند نا پسند کی بھینٹ چڑھایا گیا ہے، ایک طرف تو ڈومیسٹک کرکٹ میں پرفارم کرنے والوں کو ٹیم میں شامل کرنے کا کہا جاتا ہے لیکن میری طرف کسی کی توجہ نہیں جاتی، ڈومیسٹک سیزن کے ٹاپ پرفارمرز کو بلاتفریق مواقع ملنے چاہئیں۔ ان کا کہنا تھا کہ میں مایوس نہیں ہوں اور مجھے پاکستانی ہونے پر فخر ہے، جب بھی موقع ملا تو اچھی کارکردگی سے ملک کا نام روشن کروں گا۔

انہوں نے کہا کہ رنز صرف چوکوں اور چھکوں سے ہی نہیں بنتے بلکہ سنگلز اور ڈبلز لینا بھی ضروری ہوتا ہے۔ پاکستانی ٹیم میں اس وقت اچھے سٹرائیک ریٹ سے کھیلنے والے بیٹسمینوں کی ضرورت ہے جو جارحانہ شاٹس کھیلنے کے ساتھ سنگلز ڈبلز بھی بنائیں۔فواد عالم نے کہا کہ کرکٹ میں حوصلہ بڑھانے والے کم اور گرانے والے زیادہ ہیں، میں مثبت سوچ والوں کے ساتھ رہتا ہوں اور اسی وجہ سے مجھے اعتماد بھی ملتا ہے۔

ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ یونس خان کو مجھ پر اعتماد تھا اور جس میچ میں کیرئیر کی پہلی ٹیسٹ سنچری بنائی اس سے قبل یونس خان نے مجھے سخت گرمی میں گھنٹوں پریکٹس کروائی تھی۔ پہلی اننگز میں 16 رنز پر آﺅٹ ہونے کے باوجود یونس خان نے بھرپور حوصلہ افزائی کی جس کے بعد دوسری اننگز میں سنچری بنا ڈالی۔

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کیلئے یہاں کلک کریں

انہوں نے بتایا کہ سنچری بنانے پر یونس خان نے ناصرف مجھے مبارکباد دی بلکہ ایک ٹینس بال بھی تحفے میں دیا جس پر لکھا تھا کہ ”فواد عالم ڈیبیو سنچری۔“ بعد ازاں میرے علم میں آیا کہ یونس خان نے یہ سب پہلی اننگز میں ہی لکھ لیا تھا اور اپنے بیگ میں رکھ لیا تاہم دوسری اننگز میں سنچری بنانے پر وہ مجھے ملا۔

ان کا کہنا تھا کہ جب آپ کو اعتماد دینے والے سینئرز کا ساتھ ملے تو پھر کھلاڑی کیوں کاکردگی نہیں دکھائیں گے؟ بڑے سٹارز صرف ٹیلنٹ سے نہیں بلکہ حوصلہ افزائی اور اعتماد کیساتھ بنتے ہیں۔

مزید :

کھیل -