ہائی کورٹ کے انتظامی افسروں کی تنخواہ اور مراعات کی تفصیلات جاری ،سول بیوروکریسی سے آگے نکل گئے

ہائی کورٹ کے انتظامی افسروں کی تنخواہ اور مراعات کی تفصیلات جاری ،سول ...
ہائی کورٹ کے انتظامی افسروں کی تنخواہ اور مراعات کی تفصیلات جاری ،سول بیوروکریسی سے آگے نکل گئے

  

لاہور(نامہ نگار خصوصی )چیف جسٹس اور ججز کے بعد لاہور ہائیکورٹ کی بیوروکریسی کی تنخواہیں اور مراعات کی تفصیلات بھی جاری کردی گئی ہیں۔ ہائیکورٹ کے افسروں کے الاﺅنسز کی رقم بنیادی تنخواہ سے کئی گنا بڑھنے کے باعث ہائیکورٹ کی بیوروکریسی الاﺅنسز اور مراعات لینے میں سول بیورو کریسی سے بھی آگے نکل گئی۔

آدھے گھنٹے میں پورا شہر بند کرسکتے ہیں، ایک اشارہ کروں تو تمام کارکنان سامنے ہوں گے: مصطفی کمال

دستاویزات کے مطابق لاہور ہائیکورٹ کی بیوروکریسی کو 14 مختلف قسم کے بھاری الاﺅنسز دیئے جاتے ہیں۔ لاہور ہائیکورٹ کے گریڈ22 کے افسر کی تنخواہ 1 لاکھ26 ہزار 980 روپے ہے جبکہ گریڈ 22 کے افسر کو 1لاکھ74ہزار748 روپے کے الاﺅنسز کے علاوہ 4 لاکھ روپے کا اضافی الاﺅنس بھی ملتا ہے۔اس طرح مجموعی طور پرتنخواہ کے علاوہ گریڈ22 کے افسر کے الاﺅنسز کی رقم 5لاکھ74ہزار748 روپے بنتی ہے۔جبکہ گریڈ22 کے افسر کو ان الاﺅنسز کے ساتھ گاڑی اور دیگر مراعات اضافی بھی ملتی ہیں۔ اسی طرح ہائیکورٹ کے گریڈ21 کے افسر کی بنیادی تنخواہ 63ہزار780 روپے ہے تاہم اسے تنخواہ کے علاوہ الاﺅنسز کی مد میں 1لاکھ 48 ہزار 25 روپے اور دیگر اضافی مراعات بھی ملتی ہیں۔ اسی طرح ہائیکورٹ کے گریڈ20 کے افسر کی 57ہزار 410 روپے ہے لیکن الاﺅنسز کی رقم 1 لاکھ 41 ہزار 405 روپے اور دیگر اضافی مراعات بھی ملتی ہیں.

گریڈ19 کے افسر کی بنیادی تنخواہ 49ہزار 370 روپے اور الاﺅنسز کی رقم 1 لاکھ21ہزار863 روپے ہے، گریڈ18 کے افسر کی بنیادی تنخواہ 31ہزار890 روپے اور الاﺅنسز کی رقم85ہزار 5 روپے ہے۔ گریڈ17 کے افسر کی بنیادی تنخواہ 25ہزار 440 روپے اور الاﺅنسز کی رقم 68ہزار 896 روپے ہے، اسی طرح گریڈ16 کے افسر کی بنیادی تنخواہ صرف 15 ہزار880 روپے ہے لیکن الاﺅنسز کی رقم45ہزار 25 روپے ہے۔

مزید :

لاہور -