زرداری مجھے اور میرے بیٹے کو قتل کرانا چاہتے ہیں ، لیاقت جتو ئی کاالزام

15 اپریل 2018 (11:10)

میرپورخاص (ویب ڈیسک) سابق وزیر اعلی سندھ اور تحریک انصاف کے رہنما لیا قت علی جتوئی نے کہا ہے کہ آصف علی زرداری نے میرے اورمیرے بیٹے کے خلاف جھوٹے مقدمات اور ہمیں قتل کرنے کی سازش کر لی ہے ، ہمارے خلاف پندرہ پندرہ کیس پہلے ہی درج کیے جاچکے ہیں ،مگر ہم جھکنے والے نہیں ہیں، ایا ن علی کے لیے لطیف کھوسہ اور فاروق ایچ نائیک کی خدمات لی جاتی ہیں مگر بینظیر بھٹو کو شہید کرنے والوں کے خلاف بیان بازی کی جاتی ہے،پیپلزپارٹی کے گیارہ سالہ دور اقتدار میں آباد گار اور سندھ کے ادارے تباہ ہو چکے ہیں یہ بات انہوں نے میرپورخاص پر یس کلب میں ایک پر ہجوم پریس کانفرنس سے خطا ب کرتے ہوئے کہی۔

یوٹیوب چینل سبسکرائب کرنے کیلئے یہاں کلک کریں

روزنامہ نوائے وقت کے مطابق انہوں نے کہا کہ اگر مجھے یا میرے بیٹے یاکسی صوبائی پارٹی عہدیدارکو قتل کیا گیا تو اس کا مقدمہ آصف علی زرداری ، بلاول زرداری ، وزیر اعلی سندھ اور فریال تالپور کے خلاف درج کیا جائے میرے دور حکومت میں سندھ کی شوگر ملیں اکتوبر کے مہینے میں چلائی جاتی تھی جس سے سندھ کا آباد گار خو شحال رہتا تھا مگر اب شوگر ملوں پر زرداری مافیا کا قبضہ ہے اور اسی وجہ سے سندھ کا آبادگار گنے کے ریٹ کے لیے در بدر ہو گیا ہے۔

آباد گار سٹرکوں پر آکر اپنے حق کے لیے احتجاج پر مجبور ہیں انہوں نے کہا کہ سندھ میں تمام ادارے تباہ کر دیے گئے ہیں سندھ کے آبادگا روں کو اپنی زمینیں سیراب کرنے کے لیے پانی نہیں دوسری جانب شہریوں کو پینے کا پانی دستیاب نہیں ہے سندھ میں گیارہ سال سے زرداری کی شکل میں غلاظت موجود ہے جسے ہم آئندہ الیکشن میں صاف کر دیں گے۔

مزیدخبریں