ڈمبردرہ میں جماعت اسلامی کے زیر اہتمام مدرسہ دارالسلام اینڈ ریسرچ سنٹرکا افتتاح

ڈمبردرہ میں جماعت اسلامی کے زیر اہتمام مدرسہ دارالسلام اینڈ ریسرچ سنٹرکا ...

بونیر۔) ڈسٹرکٹ رپورٹر(یونین کونسل کڑپہ ڈمبردرہ میں جماعت اسلامی کے زیر اہتمام مدرسہ دارالسلام اینڈ ریسرچ سنٹرکا افتتاح جماعت اسلامی کے صوبائی رہنماء شیح الحدیث مولانا اسماعیل نے کی ۔اس سلسلے میں ایک تقریب یونین کونسل کڑپہ ڈمبر درہ میں منعقد ہوئی ۔جس میں سابق صوبائی وزیر حاجی حبیب الرحمان خان ۔جماعت اسلامی کے سابق امیر محمد حنیف اور ضلعی امیر محمد حلیم باچا کے علاوہ جماعت اسلامی کے ضلعی رہنماؤں ،عمائیدین علاقہ اور عوام نے کثیر تعداد میں شرکت کی ۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے جماعت اسلامی کے صوبائی رہنماء مولانا اسماعیل نے کہا کہ دینی مدارس میں 30 لاکھ طلباء طالبات دینی علوم حاصل کررہے ہیں ۔دینی مدارس اسلام کے مضبوط قلعے ہیں ۔دینی مدارس کے تمام اخراجات عوام کے چندوں سے پورے کئے جاتے ہیں ۔انہوں نے موجودہ حکومت پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ انکے پاس دینی مدارس کے لئے کوئی فنڈز نہیں ہے ۔جبکہ فنکاروں کے لئے لاکھوں روپے دئے جاتے ہیں ۔حکومت دینی مدارس کو قومی دھارے میں لانے کی بات کررہے ہیں ۔جس کو ہم ماننے کے لئے تیار نہیں ہے۔حکومت کے تعلیمی اداروں کا حال ہم سب نے دیکھ لیاہے ۔جو روز بروز بدتر ہورہی ہے ۔عوام کا حکومتی تعلیمی اداروں سے اعتماد اٹھ چکاہے ۔انہوں نے کہا کہ مسلمانوں کے نااہل حکمرانوں کی وجہ سے ہم دین سے دور ہوگئے ہیں انگریزوں نے سازش کرکے دینی اور عصری علوم کو الگ الگ کردیا۔دنیوی نظام کو چلانے کے لئے عصری علوم لازمی ہے۔اگر مدارس بھی سرکارکے کنٹرول میں اگئے تو انکا خشر سرکاری اداروں جیسا ہوگا ۔ایک سازش کے تحت دینی مدارس کو قومی دھارے میں لانے کی کو شیش کی جارہی ہے۔دینی تعلیم اور تربیت کے لئے دینی مدارس بہترین مقامات ہیں ۔مدرسہ دار السلام اینڈ اسلامک ریسرچ سنٹربونیر کا واحد دینی ادارہ ہوگا ۔جس میں دینی علوم کے ساتھ ساتھ عصری علوم بھی پڑھائی جائے گی ۔اس موقع پر مخیر خضرات نے مدرسہ کے لئے نقد رقوم دینے کے لئے فارم پر کرکے اعلانات کردئے ۔تقریب کے اخر میں خصوصی دعائیں مانگی گئی۔

مزید : پشاورصفحہ آخر