چھٹیاں منانے کیلئے پاکستان آنیوالی 15 سالہ لڑکی سے زبردستی شادی اور پھر تین سال تک روزانہ ایسی حرکت کہ آپ کا سربھی شرم سے جھک جائے گا۔۔۔

چھٹیاں منانے کیلئے پاکستان آنیوالی 15 سالہ لڑکی سے زبردستی شادی اور پھر تین ...
چھٹیاں منانے کیلئے پاکستان آنیوالی 15 سالہ لڑکی سے زبردستی شادی اور پھر تین سال تک روزانہ ایسی حرکت کہ آپ کا سربھی شرم سے جھک جائے گا۔۔۔

  

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک)برطانیہ سے چھٹیاںمنانے پاکستان آئی پندرہ سالہ لڑکی اپنوں کی درندگی کا نشانہ بن گئی۔تفصیلات کے مطابق تبسم نامی پندرہ سالہ لڑکی کچھ عرصہ پہلے لندن سے پاکستان چھٹیاں منانے کیلئے آئی تو رشتہ داروں نے چھ سالہ کزن کے ساتھ شادی کے لئے دباو ڈالا، انکار پر ظلم کے پہاڑ توڑ دیئے جس کے بعد وہ تین سال تک درندگی کا نشانہ بنتی رہی۔ رپورٹس کے مطابق زیادتی کا نشانہ بننے والی لڑکی برطانیہ میں اپنی آنٹی کے پاس رہائش پذیر تھی جبکہ اس کا باپ بیوی کے قتل کے جرم میں قید کاٹ رہا ہے۔ تبسم نے پاکستان میں چھٹیاں گزارنے کی خواہش کا اظہار کیا تو اس کی آنٹی نے اسے یہاں بھجوا دیا ۔ پاکستان میں موجود لڑکی کے رشتہ داروں نے ویزے کے حصول کے لئے زبردستی اس کی شادی چھ سالہ کزن سے کرنے کیلئے دباو ڈالا اوراس کی مرضی کے خلاف نکاح بھی پڑھوادیا گیا۔ تبسم نے قانونی چارہ جوئی کے بعد عدالت کے ذریعے طلاق لے لی ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس