دنیا کی زمین اسرائیلیوں پر تنگ ہونے لگی، جنوبی امریکہ جانے والے اسرائیلی کے پاسپورٹ پر امیگریشن افسر نے شرمناک تصویر بناکر ایسا جملہ لکھ دیا کہ اسرائیلی کے پیروں تلے سے زمین نکل گئی

دنیا کی زمین اسرائیلیوں پر تنگ ہونے لگی، جنوبی امریکہ جانے والے اسرائیلی کے ...
دنیا کی زمین اسرائیلیوں پر تنگ ہونے لگی، جنوبی امریکہ جانے والے اسرائیلی کے پاسپورٹ پر امیگریشن افسر نے شرمناک تصویر بناکر ایسا جملہ لکھ دیا کہ اسرائیلی کے پیروں تلے سے زمین نکل گئی

  

سنٹیاگو(نیوز ڈیسک) نہتے فلسطینیوں پر اسرائیل کے خوفناک مظالم نے کئی مغربی ممالک کو اسرائیل کی تنقید پر مجبور کر دیا ہے، لیکن جنوبی امریکہ کے ملک چلی کی سرحد پر تعینات ایک سیکیورٹی اہلکار نے جس طرح اسرائیل کے خلاف نفرت کا اظہار کیا ہے اس کی مثال شائد ہی کہیں اور مل سکے۔

اخبار دی انڈیپنڈنٹ کی رپورٹ کے مطابق اسرائیل سے تعلق رکھنے والے 25 سالہ شخص تال یا قوبی کا کہنا ہے کہ وہ ارجنٹینا سے چلی میں داخل ہو ا اور اپنا پاسپورٹ چیکنگ کیلئے سیکیورٹی اہلکاروں کو پیش کیا لیکن اسرائیلی پاسپورٹ دیکھتے ہی چیکنگ کرنے والے سیکیورٹی اہلکار کے چہرے پر غصے کے تاثرات آ گئے۔ یاقوبی کا کہنا ہے کہ غصے سے بھرے اہلکار نے اسرائیل سے نفرت کے اظہار کے طور پر پاسپورٹ کے اوپر مردانہ جسم کے مخصوص حصے کی تصویر بنائی اور اس کے نیچے لکھ دیا ”فلسطین زندہ باد۔ “

’یہ 10کام ہرگز نہ کرنا‘ چھٹیوں پر جانے والے نوجوان کو محبوبہ نے 10 کام کرنے سے منع کردیا، کتابچہ پکڑادیا، اس میں کیا لکھا تھا اور کون سے 10 کام تھے؟ جان کر آپ کو ہنسی بھی آئے گی اور نوجوان پر ترس بھی

اسرائیلی شہری نے بتایا کہ جب اس نے اپنے پاسپورٹ کو دیکھا تو اس کے کان شرم سے لال ہو گئے۔ وہ کہتے ہیں کہ پاسپورٹ پر ایک ایسی تصویر بنی ہوئی تھی کہ جس کے بارے میں کسی کو بتاتے ہوئے بھی انہیں شرم آتی ہے، جبکہ اس پر فلسطین زندہ باد کا نعرہ بھی لکھا ہو اتھا۔

یاقوبی کا کہنا ہے کہ ایسا صرف اس وجہ سے ہوا کہ وہ ایک اسرائیلی اور یہودی ہیں۔ انہوں نے اخبار دی انڈی پینڈنٹ سے بات کرتے ہوئے یہ بھی کہا کہ سیکیورٹی اہلکار نے پاسپورٹ پر فحش تصاویر بنانے کے بعد پاسپورٹ ان کے منہ پر دے مارا۔ وہ کہتے ہیں کہ انہیں اور ان کے ساتھی اسرائیلیوں کو سرحد پر بغیر کسی وجہ کے دیڑھ گھنٹے تک روکا بھی گیا۔

یاقوبی نے اخبار کو بتایا کہ ان کا پاسپورٹ ناکارہ ہو گیا، جس کے بعد اسرائیل واپس آکر انہوں نے 200 پاﺅنڈ (تقریبا 30ہزار پاکستانی روپے ) خرچ کر کے نیا پاسپورٹ بنوایا۔ اخبار کا کہنا ہے کہ اس واقعہ کے بعد اسرائیل اور چلی کے سفارتخانوں سے رابطہ کیا گیا لیکن دونوں جانب سے کوئی جواب موصول نہیں ہوا۔

مزید : بین الاقوامی