’یہ شرمناک کام تو ترکی میں سرعام کیا جاتا ہے‘ یورپی ملک کے ائیرپورٹ پر ترکی کے بارے میں ایسے جملے چلادئیے گئے کہ طیب اردگان کا غصہ آسمان پر جاپہنچا، سفیر کو طلب کرلیا کیونکہ۔۔۔

’یہ شرمناک کام تو ترکی میں سرعام کیا جاتا ہے‘ یورپی ملک کے ائیرپورٹ پر ترکی ...
’یہ شرمناک کام تو ترکی میں سرعام کیا جاتا ہے‘ یورپی ملک کے ائیرپورٹ پر ترکی کے بارے میں ایسے جملے چلادئیے گئے کہ طیب اردگان کا غصہ آسمان پر جاپہنچا، سفیر کو طلب کرلیا کیونکہ۔۔۔

  

انقرہ (نیوزڈیسک) آسٹریا کے ایک ایئرپورٹ میں لگی سکرین پر چلنے والی ایک خبر نے ترک حکام کو آگ بگولا کر دیا، جس کے بعد آسٹریا کے سفیر کو جواب طلبی کیلئے بلا لیا گیا۔

ویب سائٹ مڈل ایسٹ آئی کی رپورٹ کے مطابق آسٹریا کے ایک ایئرپورٹ میں لگی سکرین پر نظر آنیوالی خبر کی ایک تصویر انٹرنیٹ پر گردش کر رہی ہے۔ اس تصویر میں دیکھا جاسکتا ہے کہ سکرین پر واضح الفاظ میں لکھا ہے ”ترکی میں 15 سال سے کم عمر بچوں کے ساتھ جنسی تعلق کی اجازت ہے۔ “

تاریخ کا خطرناک ترین روسی ایٹمی ہتھیار تکمیل کے آخری مراحل میں جس کا راستہ روکنا ناممکن ہے، ایسی تفصیلات منظر عام پر کہ امریکی فوج کی راتوں کی نیندیں اڑگئیں

یہ تصویر سوشل میڈیا پر سامنے آئی تو ترکی میں ہنگامہ برپا ہو گیا، جہاں ایک جانب عوام غصے سے لال پیلے ہو رہے تھے تو وہیں ترک حکام بھی سخت طیش میں تھے۔ رپورٹ کے مطابق ترکی کے اعلیٰ حکام کا کہنا تھا کہ ایک غلط اور بے بنیاد بات کو بد نیتی کے ساتھ خبر بنا کر پیش کیا گیا، جس کا مقصد ترکی کے امیج کو خراب کرنا اور دنیا کو اس ملک کے بارے میں گمراہ کرنا تھا۔ آسٹریا کے سفیر کو اس واقعہ پر جواب طلبی کیلئے ترک وزارت خارجہ کے دفتر میں پیش ہونے کو کہا گیا، اور انہیں یہ حکم بھی دیا گیا کہ وہ اپنے ملک کے اعلیٰ ترین حکام کو ترکی کا شدید احتجاج پہنچا دیں۔

مڈل ایسٹ آئی کے مطابق ترک آئینی عدالت نے گزشتہ ماہ پینل کوڈ سے ایک ایسی شق کو نکلالنے کے حق میں فیصلہ دیا کہ جس کے مطابق 15 سال سے کم عمر بچوں کے ساتھ کسی بھی قسم کا جنسی تعلق جنسی زیادتی شمار ہو گا۔

واضح رہے کہ آسٹریا کے اسی ائیرپورٹ پر لگی ایک سکرین پر تقریباً ایک ہفتہ قبل بھی ایک متنازعہ خبر ترکی کے متعلق دکھائی گئی ، جس میں کہا گیا تھا کہ اگر آپ ترکی جاتے ہیں تو اس کا مطلب ترک صدر رجب طیب اردوان کی حمایت ہے۔ اس خبر کو بھی ترک حکومت کے شدید احتجاج کے بعد ہٹا دیا گیا تھا ۔

مزید : بین الاقوامی