برکی واقعہ کی تفتیش کیلئے حساس اداروں کی خدمات حاصل کر لی گئیں

برکی واقعہ کی تفتیش کیلئے حساس اداروں کی خدمات حاصل کر لی گئیں

  

لاہور(خبرنگار) برکی میں دو سگے بھائیوں سمیت 5 افراد کے قتل میں ملوث ملزموں کی گرفتاری کے لئے حساس اداروں سے مدد حاصل کر لی گئی ہے جس میں مفرور ملزمان کا سراغ لگانے کے لئے حساس اداروں کی ٹیموں نے کارروائی شروع کردی ہے۔ تفصیلات کے مطابق برکی کے نواحی گاؤں پھلروان میں دو سگے بھائیوں سمیت 5 افراد کے قتل میں پولیس کی تفتیش جدید سہولتوں کے باوجود ایک انچ بھی آگے نہیں بڑھ سکی ہے۔ اس واقعہ کی تفتیش اورملزمان کی گرفتاری کے لئے تشکیل دی گئی ٹیموں کے سربراہ دونوں ایس پیز تاحال جائے وقوعہ پر کرائم سین کا جائزہ نہیں لے سکے ہیں اورجدید سہولتوں کے باوجود نہ ہی چار مفرور ملزمان کا سراغ لگایا جا سکا ہے، جس پر تفتیشی ٹیموں کی کارکردگی کا جائزہ لینے کے لئے ڈی آئی جی انویسٹی گیشن نے ایس ایس پی انویسٹی گیشن سے 24 گھنٹوں کے اندر رپورٹ طلب کرلی ہے۔ دوسری جانب پولیس حکام نے برکی میں 5 افراد کے قتل کے واقعہ کو ایس پی کینٹ آپریشن ،ڈی ایس پی برکی اورایس ایچ او برکی سمیت ایس ایچ او شمالی چھاؤنی کی نااہلی قرار دے دیا ہے ذرائع کا کہنا ہے کہ حساس اداروں کی ٹیموں نے کارروائی کا آغاز کر دیاجس میں مفرورملزمان کے ٹیلی فون ڈیٹا اور رشتے داروں کے کوائف قبضہ میں لیکر تفتیش کا دائرہ کار وسیع کر دیا ہے۔

مزید :

علاقائی -