بہاولپور وکٹوریہ ہسپتال: ڈاکٹر کا زایکا، مریضوں کو من پسند لیبارٹریوں پر بھجوانے کا انکشاف

بہاولپور وکٹوریہ ہسپتال: ڈاکٹر کا زایکا، مریضوں کو من پسند لیبارٹریوں پر ...

  

بہاولپور(ڈسٹرکٹ رپورٹر) بہاول پور وکٹوریہ ہسپتال کے ڈاکٹرز نے الٹی چھری سے مریضوں کی کھال اتارناشروع کردی ہے۔ من پسند لیبارٹریوں پرٹیسٹ اورالٹراساؤنڈ تجویزکیے جانے لگے کمپنیوں سے مک مکاکرکے غیرمعیاری اور کٹ ایٹم ادویات لکھنے کاسلسلہ شروع ہوگیا ہے۔ غریب(بقیہ نمبر7صفحہ12پر )

مریضوں کی زندگیاں داؤ پرلگ گئیں۔ تفصیل کے مطابق بہاول وکٹوریہ ہسپتال کے ریٹائرڈڈاکٹرز نے ایک طرف سرکاری کوٹھیوں پرغیرقانونی قبضہ کررکھاہے دوسری طرف غریب مریضوں سے بھاری بھرفیسوں کی مدمیں کروڑوں روپے اکٹھے کرنے شروع کردیئے ہیں۔ڈاکٹر غریب مریضوں کوکمپنیوں سے پرکشش مراعات حاصل کرنے کے عوض غیرمعیاری اورکٹآئٹم میڈیسن تجویزکرکے مخصوص میڈیکل سٹوروں پربھجواتے ہیں‘ نسخہ تجویزکرنے سے قبل خون کے ٹیسٹ ‘الٹراساؤنڈ وغیرہ بھی مک مکاوالی لیبارٹریوں پربھجوائے جاتے ہیں اوران سے فی مریض کے حساب سے حصہ وصول کرلیاجاتاہے ۔ذرائع نے بتایاہے کہڈاکٹرزنے اپنے کلینکوں کے اندر ہی فارمیسی بھی بنارکھی ہیں‘ مریضوں کووہاں سے ادویات خریدنے پر مجبور کیاجاتاہے کیونکہ جوادویات مریضوں کیلئے تجویزکی جاتی ہے وہ عام میڈیکل سٹوروں پردستیاب نہیں ہیں۔ علاج معالجہ کی بجائے غیرمعیاری ادویات کی وجہ سے مریضوں کی زندگیاں داؤ پرلگ گئی ہیں ۔عوامی وسماجی حلقوں نے حکام بالاسے سخت نوٹس لینے کامطالبہ کیاہے۔

بہاولپور وکٹوریہ ہسپتال

مزید :

ملتان صفحہ آخر -