کراچی، جانوروں کا خون زیر زمین جانے سے بیماریاں پھیلنے کا خدشہ

کراچی، جانوروں کا خون زیر زمین جانے سے بیماریاں پھیلنے کا خدشہ

  

کراچی (این این آئی) شدید بارشوں کے نتیجے میں جمع پانی میں قربانی کے جانوروں کا خون شامل ہوکر زیرزمین (بورنگ)کے کنووں میں چلاگیا جس کے نتیجے میں ہیضہ (ڈائریا) سمیت پیٹ کی دیگر بیماریوں پھیلنے کاخدشہ ہے۔ تفصیلات کے مطابق عید الاضحی پر سٹرکوں پر کی جانے والی قربانیوں کے نتیجے میں جانوروں کا خون بارش کے پانی میں شامل ہوکر زیرزمین بورنگ کے پانی میں چلاگیا ہے جس کے باعث بورنگ کے کنووں کاپانی پینے سے ہیضہ (ڈائریا) سمیت پیٹ کی دیگر بیماریوں پھیلنے کاخدشہ ہے۔جناح اسپتال کی سربراہ ڈاکٹر سیمی جمالی، سول اسپتال کے ایم ایس ڈاکٹر خادم قریشی کاکہناہے کہ جگہ جگہ جمع بارش کے پانی اوراس میں جانوروں کاخون شامل ہونے سے تعفن پھیل رہاہے۔ ڈائریکٹر صحت ڈاکٹر مسعود سولنگی کنے کہاہے کہ جگہ جگہ گندگی وظلاظت کے ڈھیر اوربارش کے جمع ہونے والے پانی میں قربانی کے جانوروں کا خون شامل ہونے سے کراچی میں ڈائریا وبائی صورتحال اختیار کرسکتا ہے۔محکمہ صحت نے کہا ہے کہ مون سون موسم میں مکھیوں اور حشرات کی تیزی سے افزائش نسل ہوتی ہے جو کھانے پینے کی اشیا کوآلودہ کرتی ہیں ایسی آلودہ اشیا کے استعمال کرنے سے ڈائریاکا مرض لاحق ہوتا ہے کیونکہ موجودہ موسم ڈائریا کاہے،عوام تلی ہوئی چیزیں، باسی کھانے، گلے سٹرے پھل، آئس کریم گولے گنڈے اور بازار میں فروخت کی جانے والی برف ہرگز استعمال نہ کریں۔

بیماریاں

مزید :

پشاورصفحہ آخر -