ملک خدادادبے پناہ قربانیوں کے بعدمعروض وجود میں آیا، بریگیڈیئر امتیاز حسین 

ملک خدادادبے پناہ قربانیوں کے بعدمعروض وجود میں آیا، بریگیڈیئر امتیاز حسین 

  

ٹانک(نمائندہ خصوصی)ٹانک میں کشمیری بھائیوں کے ساتھ اظہار یکجحتی کے لئے پاک آرمی اور ضلعی انتظامیہ کے زیر اہتمام ریلی اور تقریب کا انعقاد 14اگست کو ملی جوش و جذبہ کے ساتھ منایا گیا جشن آزادی کی مرکزی کی تقریب گورنمنٹ ڈگری کالج ٹانک میں منعقد ہوئی جسمیں مہمان خصوصی سیکٹر کمانڈر ساؤتھ بریگیڈئیر امتیاز حسین، ممبر صوبائی اسمبلی محمود احمد خان بیٹنی،ضلعی ناظم مصطفی خان کنڈی، ڈپٹی کمشنر فہد خان وزیر،کمانڈنگ آفیسر لیفیٹنٹ کرنل الطاف بلوچ، سمیت ضلعی اور محکمہ پولیس کے افسران،اسکولوں کے طلباء وطالبات،سول سوسائٹی سے تعلق رکھنے والے افراد سیاسی جماعتوں کے قائدین اور شہریوں کی بہت بڑی تعداد نے شرکت کی اس موقع پر پرچم کشائی کی گئی اور پاکستان کے حصول میں قربانی دینے والے قومی ہیروز کو خراج تحسین پیش کیا گیا تقریب میں بھارتی مظالم کے خلاف اور کشمیری بھائیوں کے ساتھ اظہار یکجحتی کے طور پر پاکستانی جھنڈوں کے ساتھ کشمیری جھنڈوں کو آویزاں کیا گیا اس موقع پر بریگیڈئیر امتیاز حسین اور ڈپٹی کمشنر فہد وزیر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان حاصل کرنے کے لئے ہمارے آباؤ اجدادنے بے تحاشا قربانیاں دی ہیں جنکی دی ہوئی قربانیوں کے بدولت ہم ایک آزاد ملک میں زندگی بسر کر رہے ہیں پاکستان کے شہری اورا فواج ملک کے لئے کسی بھی قربانی سے دریغ نہیں کرے گی ملک طرف اٹھنے والے ہاتھ کاٹ دئیے جائیں گے انہوں نے کہا کہ بھارت بزدل دشمن ہے جس نے نہتے کشمیریوں پر ظلم و جبر شروع کر رکھا ہے لیکن وہ کبھی بھی اپنے مذموم مقاصد میں کامیاب نہیں ہو گا اوراس کو منہ کی کھانی پڑے گی بھارت نے مقبوضہ کشمیر کی تحریک آزادی کو ختم کرنے کے لئے جو قدم اٹھا یا ہے وہ انشاء اللہ کشمیر کی آزادی کا باعث بنے گا تحریک آزادی کشمیر کے خلاف بھارتی ہتھکنڈوں کو مسترد کرتے ہیں پاکستانی عوام اور اسکا بچہ بچہ مظلوم کشمیری بھائیوں کے ساتھ تھا ہے اور رہے گامرکزی تقریب پاکستان زندہ باد اور کشمیر بنے گا پاکستان کے نعروں سے گونج اٹھی تقریب کے اختتام پر جشن آزادی کا کیک کاٹا گیا اور بچوں میں تحائف تقسیم کئے گئے ادھر ضلعی انتظامیہ کے سربراہ فہد خان وزیر کی قیادت میں کشمیری بھائیوں کے ساتھ اظہار یکجحتی کے لئے ڈپٹی کمشنر آفس سے ریلی نکالی گئی جس میں پاک آرمی،پولیس،ضلعی انتظامیہ سرکاری محکموں کے حکام،سول سوسائٹی،مقامی صحافیوں،معززین علاقہ شہریوں اور مختلف مکاتب فکر سے تعلق رکھنے والے افراد نے شرکت کی شرکاء نے بینرز اور کتبے اٹھا رکھے تھے جن پر کشمیر ی مسلمانوں کے حق میں نعرے درج تھے

مزید :

پشاورصفحہ آخر -