امت کے بڑے محافظوں کی بھارت میں سرمایہ کاری لمحہ فکریہ ہے،راغب نعیمی

  امت کے بڑے محافظوں کی بھارت میں سرمایہ کاری لمحہ فکریہ ہے،راغب نعیمی

  

لاہور(نمائندہ خصوصی)دارالعلوم جامعہ نعیمیہ کے ناظم اعلیٰ وممبراسلامی نظریاتی کونسل علامہ ڈاکٹرراغب حسین نعیمی نے کہاہے کہ امت کے بڑے محافظوں کی بھارت میں سرمایہ کاری لمحہ فکریہ ہے۔کشمیری خود کو تنہانہ سمجھیں،پوری پاکستانی قوم آزادی کے متوالوں کے ساتھ کھڑی ہے۔جذبہ شہادت سے سرشار پاکستانی وکشمیری قوم کو شکست نہیں دی جاسکتی۔مودی سرکار کے غیر جمہوری اورغیر آئینی اقدامات سے”عالمی امن“ کوشدید خطرات لاحق ہوگئے ہیں۔مسئلہ کشمیر اقوام متحدہ کی قراردادوں کی روشنی میں حل ہوناچاہیے۔پاکستانی قوم پوری دنیا میں امن کی خواہاں مگرملکی سلامتی کے تحفظ کیلئے کسی بھی قربانی سے دریغ نہیں کریں گے۔ان خیالات کااظہار انہوں نے گزشتہ روز جامعہ نعیمیہ میں تین روز ہ اجتماعی قربانی کے اختتام پر گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

اس موقع پرتاجور نعیمی،مولانا غلام نصیرالدین چشتی،مولانا ارشدجاوید،مولانا رمضان فاروقی،پیر فاروق ا حمد،حاجی عمران،مولانا محمدامین،مولانا سعید احمدنقیبی دیگر بھی موجود تھے۔ انہوں نے بتایا کہ امسال جامعہ نعیمیہ میں پہلے دن 164،دوسرے دن110،چار اونٹ،تیسرے دن8جانورراہ خدا میں قربان کئے گئے جبکہ جامعہ سراجیہ نعیمیہ برائے طالبات میں بھی60جانوروں کی قربانی کی گئی۔مجموعی طور پر 2400 سے زائدخاندانوں نے استفاد ہ کیا۔علامہ راغب نعیمی نے مزید کہاکہ دنیا بھر میں انسانی حقوق کی تنظیمیں مقبوضہ کشمیر میں ہونے والے بھارتی مظالم کے خلاف آواز اٹھائیں۔عالمی برادری مقبوضہ کشمیر کی حیثیت کوبھارتی جارحیت سے بچانے کیلئے اپناکرداراداکرے۔اقوام متحدہ سمیت دیگر عالمی اداروں نے اپنی ذمہ داری ادا نہ کی توکروڑوں انسانوں کی زندگیوں کاوجود خطرے میں پڑ سکتاہے۔انسانیت کے تحفظ کیلئے عالمی برادری مقبوضہ وادی کے شہریوں کو”آزاد

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -