داعشی دہشت گردوں کے بچوں کی وطن واپسی قبول نہیں، برطانوی وزرات داخلہ 

  داعشی دہشت گردوں کے بچوں کی وطن واپسی قبول نہیں، برطانوی وزرات داخلہ 

  

 لندن(اے پی پی) برطانوی حکومت نے کہا ہے کہ جنگ زدہ علاقوں میں مقیم برطانیہ سے تعلق رکھنے والے داعشی دہشت گردوں کے بچوں کو واپس برطانیہ نہیں آنے دیا جائے گا۔فرانسیسی جریدے ایکسپرس کے مطابق  برطانوی حکومت نے اپنے اس فیصلے کی وجہ بتاتے ہوئے کہا ہے کہ  دہشت گردوں کے ان بچوں کو نجات دلانے کے لئے شامی کیمپوں میں فوجیوں کو بھیجنا بہت ہی خطرناک ہے۔ساجد جاوید نے وزارت داخلہ کے عہدے پر رہتے ہوئے اپنا یہ آخری فیصلہ سنایا ہے، وہ اب وزیر خزانہ کا عہدہ سنبھال چکے ہیں۔  

مبصرین کا کہنا ہے کہ ان بچوں کے والدین کہ جن کی برطانوی شہریت سلب کرلی گئی ہے، برطانیہ کی دوبارہ شہریت حاصل کرنے کے لئے کہیں اپنے بچوں کو استعمال نہ کریں۔اس سے پہلے جرمنی نے بھی کہا تھا کہ شام میں موجود داعش سے تعلق رکھنے والے جرمنی کے دہشت گردوں کو اسی وقت واپس آنے کی اجازت ہو گی جب وہ  ہتھیار کر دیں اور کیمپوں میں حاضر ہو جائیں۔ 

مزید :

عالمی منظر -