شراب لائسنس کیس ، وزیراعلیٰ پنجاب سے طلب جوابات کی تفصیلات سامنے آگئیں

شراب لائسنس کیس ، وزیراعلیٰ پنجاب سے طلب جوابات کی تفصیلات سامنے آگئیں
شراب لائسنس کیس ، وزیراعلیٰ پنجاب سے طلب جوابات کی تفصیلات سامنے آگئیں

  

لاہور(ڈیلی پاکستان  آن لائن) وزیراعلیٰ پنجاب سے شراب لائسنس کیس میں طلب جوابات کی تفصیلات سامنے آگئیں۔

نجی ٹی وی 92 نیوز نے ذرائع کے حوالے سے کہاہے کہ وزیراعلیٰ پنجاب کو جاری کئے گئے سوالنامے کی تفصیلات سامنے آگئی ہیں ، ذرائع کاکہناہے کہ وزیراعلیٰ پنجاب سے تنخواہ،آمدن کے ذرائع اور کاروباری آمدن کی تفصیلات طلب کی گئی ہیں،اس کے علاوہ یوٹیلیٹی بلزسمیت ملازمین کی تعدادکے بارے میں بھی تفصیلات طلب کی گئی ہے۔

ذرائع کاکہناہے کہ وزیراعلیٰ پنجاب سے وراثتی جائیدادسمیت منقولہ و غیر منقولہ جائیدادوں کی تفصیلات بھی مانگی گئی ہیں،اس کے علاوہ خریدے،لیز پر لئے گئے یا بذریعہ نیلامی یا تحفے میں وصول شدہ اثاثوں کی تفصیلات بھی طلب کی گئی ہے۔

ذرائع کامزید کہنا ہے کہ جواثاثے وزیراعلیٰ پنجاب کی ملکیت نہیں ان کی فروخت کی تفصیلات بھی طلب کرلی گئیں،وزیراعلیٰ سے بیرون ملک دوروں سے متعلق تفصیلات بھی مانگی گئی ہیں ،اس کے علاوہ بینک اکاﺅنٹس اوراہلخانہ کے کریڈٹ کارڈز قرضوںکی تفصیلات بھی طلب کی گئی ہیں ۔

ذرائع کاکہناہے کہ وزیراعلیٰ سے بچوں کے تعلیمی اخراجات اور دیگرتفصیلات بھی طلب کی گئیں،وزیراعلیٰ پنجاب سے الیکشن اخراجات کی تفصیلات بھی مانگی گئی ہیں ،تفصیلات نیب آرڈیننس کے سیکشن 19 اور 27 کے تحت طلب کی گئی ہیں ،غلط معلومات کی فراہمی پر نیب آرڈیننس کے شیڈول 4 کے تحت5 برس کی سزا ہو سکتی ہے۔

مزید :

قومی -علاقائی -پنجاب -لاہور -