وعدہ تھامارچ میں حکومت کی بساط لپیٹ دی جائے گی،مارچ تو نکل گیا اب ملین مارچ ہی رہ گیا ہے،مولانا فضل الرحمان

وعدہ تھامارچ میں حکومت کی بساط لپیٹ دی جائے گی،مارچ تو نکل گیا اب ملین مارچ ...
وعدہ تھامارچ میں حکومت کی بساط لپیٹ دی جائے گی،مارچ تو نکل گیا اب ملین مارچ ہی رہ گیا ہے،مولانا فضل الرحمان

  

پشاور(ڈیلی پاکستان آن لائن)جمعیت علمائے اسلام کے رہنما مولانافضل الرحمان نے کہاہے کہ وعدہ تھامارچ میں حکومت کی بساط لپیٹ دی جائے گی،مارچ تو نکل گیا اب ملین مارچ ہی رہ گیا ہے۔

مولانا فضل الرحمان نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہاکہ موجودہ حکومت جعلی مینڈیٹ پر آئی ہے،نئے انتخابات وقت کی اشد ضرورت ہیں، حزب اختلاف کی اشتراک سے تحریکیں کامیاب ہوتی ہیں،قوم کے سامنے واضح پلان رکھنے کی کوشش کریں گے۔

مولانا فضل الرحمان نے کہاکہ پارلیمانی پارٹی کے اجلاس میں تمام بلز کاجائزہ لیا،اتفاق کیساتھ تحریک چلائیں توہی عوام کااعتماد حاصل کر سکتے ہیں،انہوں نے کہاکہ اے پی سی سے متعلق کوئی اختلاف نہیں،ہمارے رابطے ابھی بھی جاری ہیں،ہمیں یکسوئی چاہئے اس کیلئے ہم اعتماد حاصل کرنا چاہتے ہیں ،کوشش ہے تذبذب سے نکلیں اور قوم کے سامنے واضح پلان رکھیں ۔

انہوں نے کہاکہ وعدہ تھا کہ مارچ میں حکومت کی بساط لپیٹ دی جائے گی،مارچ تو نکل گیا اب ملین مارچ ہی رہ گیا ہے۔رہنماجمعیت علما اسلام نے کہاکہ فلسطینیوں کی جدوجہد آزادی کی یہاں کوئی قدروقیمت نہیں،فلسطین ہو یا کشمیر آزادی کےلئے جدوجہد کی حمایت کریں گے ،کمزور ممالک پر اسرائیل کو تسلیم کرنے کےلئے دباوَ ڈالا جارہا ہے،کشمیر یوں کےساتھ کھڑے ہیں۔

مزید :

قومی -علاقائی -خیبرپختون خواہ -پشاور -