اسلام آباد ہائیکورٹ نے عطا تارڑ کی حفاظتی ضمانت  14 روز کیلئے منظور کرلی

اسلام آباد ہائیکورٹ نے عطا تارڑ کی حفاظتی ضمانت  14 روز کیلئے منظور کرلی
اسلام آباد ہائیکورٹ نے عطا تارڑ کی حفاظتی ضمانت  14 روز کیلئے منظور کرلی

  

اسلام آباد ( ڈیلی پاکستان آن لائن ) وزیر اعظم کے معاون خصوصی عطا تارڑ نے گرفتاری سے بچنے کیلئے اسلام آباد ہائیکورٹ سے رجوع کیا ، عدالت نے  عطا تارڑ کی حفاظتی ضمانت  14 روز کیلئے منظور کرلی ۔

وزیر اعظم کے معاون خصوصی عطا تارڑ کی جانب سے اسلام آباد ہائیکورٹ میں  درخواست دی گئی جس میں کہا گیا کہ پنجاب پولیس نے  ان کی رہائشگاہ پر چھاپہ مارا ہے ،  متعلقہ عدالت سے رجوع کرنے کیلئے ان کی حفاظتی ضمانت منظور کی جائے اور پنجاب پولیس کو گرفتاری سے روکا جائے ۔

قائم مقام چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ جسٹس  عامر فاروق نے عطا تارڑ کی درخواست پر سماعت کی  اور 14 روز کیلئے ان کی حفاظتی ضمانت منظور کی ۔ 

خیال رہے کہ گزشتہ روز  نجی ٹی وی "جیو نیوز" سے گفتگو کرتے ہوئے  وزیر اعظم شہباز شریف کے معاون خصوصی کا کہنا تھا کہ  مجھے ابھی تک کوئی قانونی نوٹس موصول نہیں ہوا، میں کل بھی پنجاب میں تھا، یہ کیسا پنجاب کا وزیر داخلہ ہے جو نوٹس بھی ٹھیک سے نہیں بھیج سکتا؟۔

 عطا تارڑ نے کہا کہ وزیر داخلہ پنجاب ہاشم ڈوگر اور ان کی ٹیم نااہل ہے، کل جس گھر پر چھاپہ مارا گیا وہاں میں اب نہیں رہتا، جہاں چھاپا مارا گیا 15 سال سے اس گھر میں نہیں گیا، وہاں جا کر میرے پڑوسی کو نوٹس دیا گیا۔

انہوں نے کہا کہ نوٹس ملے تو دیکھ کر ہی فیصلہ کروں گا کہ کمیٹی کے سامنے پیش ہونا چاہیے یا نہیں، 48 گھنٹوں میں ایک نوٹس بھی نہیں بھیجا گیا۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -