جنرل ہسپتال کی ایمرجنسی کے ساتھ پبلک واش رومز فنکشنل کر دییگئے

جنرل ہسپتال کی ایمرجنسی کے ساتھ پبلک واش رومز فنکشنل کر دییگئے

  

لاہور (جنرل رپورٹر)جنرل ہسپتال کی انتظامیہ نے ایک اور انقلابی قدم اٹھاتے ہوئے ایمرجنسی کے ساتھ پبلک واش رومز فنکشنل کر دیے جبکہ مریضوں کے ساتھ آنے والے لواحقین کیلئے شیڈ میں بینچ بھی رکھوا دئیے گئے ہیں تاکہ دور دراز سے آنے والے مریضوں اور اُن کے لواحقین کو صاف ستھرا اور آرام دہ ماحول میسر آ سکے ۔ اس حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے پرنسپل پروفیسر محمد طیب نے کہا کہ شعبہ حادثات میں 24گھنٹے کے دوران 3ہزار کے لگ بھگ مریض آتے ہیں ا ور ملک بھر سے دماغی امراض کا خصوصی علاج صرف یہاں موجود ہے۔

لہذا اس امر کا خصوصی طور پر اہتمام کیا گیا ہے کہ یہاں آنے والے ہر شخص کو بلا تفریق زیادہ سے زیادہ سہولتیں مہیا ہو سکیں۔

پرنسپل نے گزشتہ روز میڈیکل سپرنٹنڈنٹ ڈاکٹر محمود صلاح الدین اور ڈائریکٹر ایڈمنسٹریشن ڈاکٹر رانا محمد شفیق کے ہمراہ مختلف شعبوں کا جائزہ لیا۔ عملے کی حاضری چیک کی اور موقع پر کئی ایک ہدایات جاری کیں ۔اپنی گفتگو میں پرنسپل پروفیسر محمد طیب کا کہنا تھا کہ ایل جی ایچ کی مارننگ اور ایوننگ آؤٹ ڈور شفٹ میں تقریبا 6ہزار شہریوں کو مفت علاج معالجے کی سہولتیں دی جاتی ہیں جبکہ شعبہ بیرونی مریضاں میں صبح8سے شام8بجے تک ادویات کی فراہمی بھی عمل میں لائی جاتی ہے۔انہوں نے بتایا کہ ہسپتال میں مانیٹرنگ کا نظام مزید سخت کر دیا گیا ہے اور معمول کے اوقات میں ادویات کی کمپنیوں کے نمائندوں کا داخلہ بھی ممنوع قرار دیا گیا ہے۔اسی طرح مریضوں کی بڑھتی ہوئی تعداد کے پیش نظر گائنی وارڈ میں بسترو ں کی تعداد دوگنا کرنے کے علاوہ سرجری کے شعبے میں بیڈز بڑھا دیے گئے ہیں ۔پروفیسر محمد طیب نے کہا کہ لاہور جنرل ہسپتال میں مستقل بنیادوں پر بہتری کا عمل جاری رکھا جاتا ہے اور خود کار نظام کے تحت بہتر کام کرنے والوں کی حوصلہ افزائی اور غیر حاضر یا کام چوری کرنے والوں کو سزا کے عمل سے گزارا جاتا ہے ،پروفیسر محمد طیب نے کہا کہ موجودہ حکومت کی پالیسی کے مطابق جنرل ہسپتال میں ادویات ،آپریشن کے سامان ، سی ٹی سکین سمیت تشخیصی ٹیسٹ اور دیگر سہولتوں کی فراہمی کو مزید بہتر بنایا جائے گا ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -