انفرادی قانون کا نفاذ فساد کا سبب ہے ،عبدالقدیر اعوان

انفرادی قانون کا نفاذ فساد کا سبب ہے ،عبدالقدیر اعوان

  

پشاور (سٹی رپورٹر) امیر عبدالقدیر اعوان شیخ سلسلہ نقشبندیہ اویسیہ و سربراہ تنظیم الاخوان پاکستان نے کہا ہے کہ ملک میں ایسا نظام رائج کرنے کی ضرورت ہے جو مظلوم کو اس کا حق دلائے اور طاقتور کو معاشرے میں ظلم کرنے سے روکے اور اس کا نفاذ ملک میں ہمارے منتخب کردہ نمائندوں کی ذمہ داری ہے کیونکہ انفرادی طور پر قانون کا نفاذفساد کا سبب ہے ۔ ان خیالات کا اظہار اُنہوں نے گزشتہ روز جمعتہ المبارک کے موقع پر خطاب کرتے ہوئے کیا ۔اُنہوں نے کہا کہ ہمارے ملک کا سارا نظام انگریز کا دیا ہوا ہے اوریہ نظام غلاموں کے لیے بنایا گیا تھا تو پھر ہم محکوم قوموں کے نظام میں آزادی کا تصور کیسے کر سکتے ہیں جبکہ تعلیمی نظام سے لے کر معاشی نظام تک ہم غیر اسلامی نظام میں جکڑے ہوئے ہیں اسی وجہ سے ملک میں مثبت تبدیلی نا ممکن ہے اُنہوں نے کہا کہ ریاست مدینہ کی مثال عملی طور پر تب ہی دی جا سکتی ہے جب نظام بھی ریاست مدینہ کا ہوجبکہ وہی نظام جو آپ ﷺ نے ریاست مدینہ میں رائج کیا آج وطن عزیز کو اُسی نظام کی ضرورت ہے ُ اُنہوں نے کہا کہ معاشرے میں اگر کوئی کسی سے زیادتی کرے اور اگر دوسرا فریق اُسے معاف کردے تو اللہ کریم کے نزدیک یہ بہت بہتر عمل ہے اور یہی عمل ہمارے اعمال کی کمی کا کفارہ بن جائے گا ۔کیونکہ ہماری عبادات اس قابل نہیں کہ وہ اللہ کریم کی شان کے مطابق ہوں۔بندے کے معاملات ،لین دین،عبادات میں کئی کمیاں رہ جاتی ہیں

مزید :

پشاورصفحہ آخر -