ملتان سنٹرل جیل میں نظر بند44 لبیک رہنماؤں کی مشروط رہائی کا حکم

ملتان سنٹرل جیل میں نظر بند44 لبیک رہنماؤں کی مشروط رہائی کا حکم

  

ملتان(وقائع نگار ) تحریک لبیک یا رسول اللہ کے رہنماوں اور کارکنوں کی نظر بندی کے معاملے پرہوم ڈیپارٹمنٹ پنجاب نے ملتان(بقیہ نمبر24صفحہ12پر )

سنٹرل جیل میں نظر بند 44 رہنماؤں کی مشروط رہائی کا حکم دیا ہے۔اس حوالے سے احکامات جاری کر دئیے گئے ہیں۔جس میں کہا گیا ہے کہ ان رہنماؤں کو رہائی کے لیے شورٹی بانڈز دینے ہوں گے۔اور جاری پروفارما کو مکمل کیا جانا لازمی قرار دیا گیا ہے۔ واضح رہے اس حوالے سے شرائط رکھی گئی ہے۔شرائط کے مطابق شورٹی بانڈز پر ایک ضامن اور دو گواہوں کے دستخط ہونگے۔شرائط کی خلاف ورزی پر 5 لاکھ روپے ہرجانہ بھی وصول کیا جائے گا۔رہائی پانے والا کسی ریاستی امن میں خلل پیدا نہیں کرے گا، براہ راست یا بالواسطہ پبلک سیکورٹی اور مذہبی معامالات میں بدامنی میں ملوث نہیں ہو گا، قانون نافذ کرنے والے اداروں سے مزہبی معاملات میں قانون کے مطابق تعاون کرے گا، اگر کوئی معلومات کسی انہتا پسندی کے بارے میں ملیں گی تو انتظامیہ کو بتانے کا پابند ہو گا، ملتان میں مجموعی طور پر 72 رہنماؤں اور کارکنوں کو نظر بند کیا گیا تھا۔

رہنمائی

مزید :

ملتان صفحہ آخر -