کرپشن الزامات نظرانداز، ڈاکٹر علی مہدی نشتر میں ایم ایس ایڈمن تعینات

کرپشن الزامات نظرانداز، ڈاکٹر علی مہدی نشتر میں ایم ایس ایڈمن تعینات

  

ملتان ( وقائع نگار)نشتر ہسپتال کی انتظامیہ نے کرپشن،قواعد کے برعکس بھرتی سمیت دیگر الزامات کو نظر انداز کرتے ہوئیڈاکٹر علی مہدی کو نشتر ہسپتال میں اے ایم ایس ایڈمن تعینات کر دیا ہے۔جس کے بعد نشتر ملازمین میں بے چینی کی لہر دوڑ گئی ہے۔ملازمین کا کہنا ہے کہ اگر نشتر ہسپتال کے (بقیہ نمبر40صفحہ12پر )

ایم ایس نے کرپشن۔قواعد کے برعکس درجہ چہارم کی بھرتی میں ملوث ڈاکٹر علی مہدی کو اہم انتظامی عہدے اے ایم ایس ایڈمن سے نہ ہٹایا۔تو مجبورا احتجاج کیا جائے گا۔اس کیعلاوہ ملازمین چیف جسٹس پاکستان۔وزیر اعظم۔سمیت دیگر اعلی حکام کو مذکورہ آڈر کی منسوخی اور سخت محکمانہ کارروائی کیلئے درخواستیں بھی بھیجوا رہے ہیں۔ملازمین نے نشتر انتظامیہ پر الزام لگایا کہ ڈاکٹر علی مہدی اے ایم ایس ایڈمن کو اس لئے تعینات کیا گیا ہے کہ وہ پاکستان تحریک انصاف کے صوبائی ممبر کے عزیز ہیں۔جبکہ نشتر حکام کے مطابق ڈاکٹر علی مہدی کے سابق حالات کے بارے میں علم نہیں۔اگر اب بطور اے ایم ایس ایڈمن کچھ کیا۔تو سخت محکمانہ کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -