امام مسجد کی گرفتاری، ڈی سی شیخوپورہ سے رپورٹ طلب

امام مسجد کی گرفتاری، ڈی سی شیخوپورہ سے رپورٹ طلب

  

لاہور(نامہ نگار خصوصی)لاہور ہائیکورٹ نے امام مسجد جامعہ غوثیہ کوٹ عبدالمالک کی گرفتاری کے خلاف دائردرخواست پرڈی سی شیخوپورہ سے رپورٹ طلب کر لی۔جسٹس سید مظاہر علی اکبر نقوی نے اس بابت انجمن محمدیہ نعمانیہ کے محمد آصف کی درخواست پر ہوم سیکرٹری پنجاب، ڈی سی شیخوپورہ اور ایس ایچ او فیکٹری ایریا شیخوپورہ کونوٹس جاری کردیئے ہیں۔درخواست گزارکا موقف ہے کہ 23 نومبر کو70 سالہ امام مسجد قاضی منیر احمد نعمانی کو بلاجواز گرفتار کیا گیا ،امام مسجد کی گرفتاری کے خلاف ڈی سی شیخوپورہ کو درخواست بھی دی۔قاضی منیراحمد کی گرفتاری کی وجوہات بھی نہیں بتائی جا رہیں،امام مسجد کے خلاف کوئی مقدمہ درج ہے اورنہ ہی نظربندی کا حکم نامہ موجود ہے، ان کی کوئی سیاسی وابستگی بھی نہیں، گرفتاری کے خلاف علاقہ مکینوں نے احتجاج کیاتوپولیس نے مظاہرین پر سیدھی فائرنگ کرکے 2 نوجوانوں ریحان اور فیض سلطان کوقتل کردیا،گرفتار امام مسجد شوگر، ہیپاٹائٹس ، بلڈ پریشر اور گردوں کے مرض میں مبتلا ہیں،انہیں بازیاب کرواکے رہا کیا جائے۔اس کیس کی مزید سماعت17دسمبر کو ہوگی۔

امام مسجد گرفتار

مزید :

علاقائی -