خدمت کا نعرہ لگانے والے بھیس بدل کر دوبارہ ووٹ مانگنے آگئے ہیں : ڈاکٹر خالد محمود چودھری

خدمت کا نعرہ لگانے والے بھیس بدل کر دوبارہ ووٹ مانگنے آگئے ہیں : ڈاکٹر خالد ...

  

لاہور(ڈویلپمنٹ سیل)ڈاکٹر خالد محمود چودھری کا مخالفین کو مناظرے کا چیلنج،ہمارے آخری انتخابی جلسے کی حاضری نے گزشتہ3سالہ شاندار کارکردگی پر مہر ثبت کر دی ہے،2015ء کے انتخابی منشور میں90فیصد عمل درآمد کیا ہوا ہے ،،منتخب ہو کر کامیابی کے تسلسل کو جاری رکھیں گے،خدمت کا نعرہ لگانے والوں کو جب موقع ملا تو کچھ نہ کر سکے اب بھیس بدل کر دوبارہ ووٹ مانگنے آ گئے ہیں،آئندہ میرے دور میں کبھی چھوٹی چھوٹی بات پر کوئی ڈیلرز بلیک لسٹ نہیں ہو گافیصلے ہم کریں گے ان خیالات کا اظہار ڈی ایچ اے اسٹیٹ ایجنٹس ایسوسی ایشن کے آج ہونے والے انتخابات میں پروفیشنل گروپ کے صدارتی امیدوار ڈاکٹر خالد محمود چودھری نے روزنامہ پاکستان سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کیا،انہوں نے کہا کہ اندر اور باہر سے ایک ہیں ہمارے قول فعل میں تضاد نہیں ہم نے جو منشور 2015ء میں دیا تھا اس پر 90فیصد عمل کر کے دکھایا ہے،ہم نے علیحدہ دفتر کے خواب کو سچ کر دکھایا،آڈٹ کا رواج نہیں تھا ہم نے10سالہ آڈٹ کروایا،اے جی ایم کی روایت نہیں تھی اب ہم نے مسلسل3سال اے جی ایم کروائی،ڈاکٹر خالد محمود چودھری نے بتایا کہ تبدیلی کا نعرہ لگانے والوں کو علم ہو نا چاہیے ہم 2015ء میں تبدیلی لے آئے تھے3سال کے ہمارے کام اٹھا کر دیکھ لیں اور ایسوسی ایشن کی پوری تاریخ دیکھ لیں اللہ کے فضل سے ہمارا کوئی مقابلہ نہیں ،انہوں نے کہا کہ ووٹر آج فیصلہ کریں گے کہ انہوں نے کام کے تسلسل کو جاری رکھنا ہے یا بحران پیدا کرنا ہے ،ہم نے با صلاحیت اور اعلیٰ تعلیم یافتہ پینل دیا ہے ہمارے پورے پینل کے9ووٹ دیں تاکہ ہم اپنی پوری ٹیم کے ساتھ کام کر سکیں۔

ڈاکٹر خالد محمود چودھری

مزید :

صفحہ آخر -