100روزہ پلان ،عوام کو مہنگائی ، بدامنی اور مایوسی کے سواکچھ نہیں ملا ، مولاناعطاء الحق

100روزہ پلان ،عوام کو مہنگائی ، بدامنی اور مایوسی کے سواکچھ نہیں ملا ، ...

  

صوابی( بیورورپورٹ)جمعیت علماء اسلام صوبہ خیبر پختونخوا کے نائب و ضلعی امیر صوابی مولانا عطاء الحق درویش نے کہا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف کی مرکزی اور صوبائی حکومت کی سو دن کا پلان ملک میں اشیائے خوردونوش کی قیمتوں ، ٹیکسز اورمہنگائی میں اضافے ، مایوسی اور بد امنی کی لہر کے سوا اور کچھ نہیں ۔ ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ صوبہ خیبر پختونخوا میں حکومتی رٹ قائم ہے نہ ہی وزیر اعلیٰ اور حکومت کی قیام عوام محسوس کر رہے ہیں انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت صرف اسلام دشمن اور عوام دشمنی کی طرف گامزن ہے انہوں نے کہا کہ احتساب کے نام پر ڈرامہ رچا کر صرف مخالفین کونشانہ بنایاجارہاہے حالانکہ عمران خان کو خود اپنے وزراء کا کھڑا احتساب کرنا چاہئے کیونکہ ان کے ماضی اور حال میں زمین اور آسمان کا فرق ہے یہ لوگ خود کرپشن میں ملوث رہے ہیں جب کہ پی ٹی آئی حکومت نے سابقہ دور میں بی آر ٹی کا جو منصوبہ شروع کیا تھا وہ تاحال تعطل کا شکار ہے اور اس میں بھی کافی خرد برد کی گئی ہے اس منصوبے کی وجہ سے پشاور بھر میں ہسپتالوں ، سکولوں ، دفاتر اور کارباری طبقے کو تکلیف کا سامنا ہے حکومتی کارکر دگی صفر ہے اور یہ ان کی منہ بولتی ثبوت ہے انہوں نے جے یو آئی کے مرکزی رہنما اور ایم ایم اے حکومت کے سابق تر جمان مولانا مفتی کفایت اللہ کی گرفتاری کی شدید مذمت کر تے ہوئے کہا کہ علماء کرام جمہوری انداز میں دین اسلام کیلئے کر دار ادا کر رہے ہیں اور اس مطالبے پر مفتی کفایت اللہ کی گرفتاری اسلام دشمنی کے سوا کچھ بھی نہیں لہٰذا ہمارا مطالبہ ہے کہ مفتی کفایت اللہ کو جلد از جلد رہا کیا جائے ورنہ جے یو آئی خیبر پختونخوا سمیت پورے ملک میں اپنی قائدین کے احکامات کی روشنی میں تحریک چلائے گی #

مزید :

کراچی صفحہ اول -