بستی ملوک: وراثتی زمین ہتھیانے کیلئے چچا کابھتیجے، بھتیجی پرتشدد

بستی ملوک: وراثتی زمین ہتھیانے کیلئے چچا کابھتیجے، بھتیجی پرتشدد

  



بستی ملوک(نمائندہ پاکستان)خون سفید ہوگیا بڑے بھائی کی وفات کے بعد چھوٹے بھائی نے بیوہ بھابی اور اس کے بچوں پر زمین تنگ کردی وراثتی زمین ہتھانے کیلئے بھتیجے۔بھتیجی کا سر کھول دیا۔تفصیلات کے مطابق تھانہ بستی ملوک کی حدود میں مرحوم بھائی کی وراثتی زمین ہتھیانے کیلئے اپنے ہی خونی رشتوں کا خون کر دیا۔محمد ایوب نیاپنے والد محمد ادریس کے ہمراہ بتایا کہ میرابڑا بھائی محمد جمشید کچھ عرصہ(بقیہ نمبر38صفحہ12پر)

قبل وقات پا گیا تھا جس کی بیوی اور سات بچے میرے ساتھ رہتے ہیں جبکہ میرا دوسرا بھائی فلک شیر بھائی کی وقات کیبعد اس کی زمین ہتھیانے کیلئے آئے روز ہم سب کو پریشان کرتا رہتا ہے مرحوم بھائی جمشید کے بچے اپنی وراثتی زمین پر مکان بنانا چاہتے ہیں لیکن فلک شیر 15پر کال کر کے پولیس کو بلوا لیتا ہے زمین کا معاملہ عدالت میں بھی چل رہا ہے گزشتہ روز بھی اس نے بھتیجے اور بھتیجی کو مارا پیٹا ڈانڈا لگنے سے ان کے سر پھٹ گئے پولیس نے ڈاکٹ جاری کرتے ہوئے کاروائی شروع کردی جبکہ دوسرے دن ایوب نے بھی فرضی لڑائی کا بہانا بنا کر پولیس سے ڈاکٹ بنوا لیا اور ہمیں بلیک میل کرنے کیلئے کاروائی کر رہا ہے ہمارے والد بھی حیات ہیں وہ بھی اس سے سخت تنگ ہے ہماری اعلی حکام سے اپیل ہے کہ بلا جواز پریشان کرنے پر اس کے خلاف کاروائی کی جائے اور جو جس کا حق ہے اس دیا جائے۔

تشدد

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...