ماضی کی حکومتوں نے اپنی غلط پالیسیوں سے ملک کو مقروض کر دیا:پرویز خٹک

ماضی کی حکومتوں نے اپنی غلط پالیسیوں سے ملک کو مقروض کر دیا:پرویز خٹک

  



چارسدہ(بیو رو رپورٹ) وزیر دفاع پرویز خٹک نے کہا ہے کہ ماضی کی حکومتوں کی غلط پالیسوں کی وجہ سے ملک اس وقت بیرونی قرضوں میں ڈوبا ہوا ہے۔ پاکستان میں وسائل کی نہیں بلکہ ایماندار قیاد ت کی کمی ہے۔اگلے چند سالوں میں ملک کی آمدن اور اخراجات برابر ہو جائینگے جس سے ملک معاشی طور پر مستحکم ہوگا۔ ان خیالات کااظہار انہوں نے عمرزئی میں سابق صوبائی وزیر اور قومی وطن پارٹی کے صوبائی نائب صدر ارشد عمرزئی کی پی ٹی آئی میں شمولیت کے موقع پر خطاب کے دوران کیا۔اس موقع پر اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر اورصوبائی وزیر اطلاعات شوکت یوسفزئی نے بھی خطاب کیا جبکہ اس موقع پر ایم این ایز فضل محمد خان،ملک انور تاج، ایم پی ایز  حیدر علی خان، فضل شکور خان،عارف احمد زئی اور دیگر قائدین بھی موجود تھے۔تقریب سے خطاب کر تے ہوئے وزیر دفاع پرویز خٹک،سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر اوروزیر اطلاعات شوکت یوسفزئی نے کہا کہ ماضی کے حکومتوں نے عوام کو کھوکھلے نعروں سے بے وقوف بنایا اور کئی دہائیوں تک عوام پر غلط معاشی پالیسوں تسلط کی جس کی وجہ سے ملک بیرونی قرضوں میں ڈوبا ہو ا ہے۔ پی ٹی آئی حکومت نے دس ارب ڈالر کا قرضہ لیکر سابقہ حکومتوں کے واجب الادا قرضوں اور سود میں ادا کیا۔ مقررین نے کہا کہ پیپلزپارٹی اور مسلم لیگ نے ریاستی اداروں کو عوامی مفاد کی بجائے اپنے ذاتی مفاد کے لئے استعمال کیا جس سے ریاستی اداروں اور عوام کا استحصال ہو ا۔ پاکستان کی تاریخ میں پہلی مرتبہ ملک کو ایماندار قیادت ملی ہے جس نے اداروں کو سیاست سے پاک کر دیا جبکہ ملک کی معیشت کو مثبت سمت میں گامزن کرنے کے لئے عوام دوست معاشی پالیساں متعارف کر ائی جس سے اگلے چند مہینوں میں آمدن اور اخراجات کا توازن ٹھیک ہو جائیگاجس سے یقینا ملک معاشی طور پر مستحکم ہوجائے گا۔۔مقررین کا مزید کہنا تھا کہ پاکستان میں وسائل کی کمی نہیں مگر کرپٹ مافیا کی وجہ سے ملک معاشی طو رپر تباہی کے دلدل میں پھنس گیا۔ عمران خان کی حکومت گرانے کیلئے کرپٹ سیاستدانوں کا ٹولہ ایک پیج پر ہے مگر جس طرح مولانا فضل الرحمان کی نام نہاد آزادی مارچ، پلان بی اور سی ناکام ہو ا ہے اسی طرح دیگر اپو زیشن پارٹیوں کی سازشیں بھی ناکام ہو جائینگے۔ انہوں نے کہا کہ اپو زیشن قوم کو منفی پرا پیگنڈوں سے گمراہ کر نے کی ناکام کو ششیں کر رہی ہے مگر عمران خان کی قیادت میں تحریک انصاف کی پالیسیاں عوام کی تقدیر بدل رہی ہے جس سے عوام اچھی طرح آگاہ ہے۔ مقررین نے کہا کہ عمران خان پاکستان کے نہیں پورے عالم اسلام کے لیڈر بن چکے ہیں۔سعودی ایران کشیدگی میں عمرا ن خان نے کردار ادا کیا جس سے دونوں اسلامی ممالک کے درمیان تنازعہ کی شدت میں کمی ہوئی۔تقریب سے ایم این اے فضل محمد خان، ارشد خان عمر زئی اور ولی محمد نے بھی خطاب کیا جبکہ اس موقع پر قومی وطن پارٹی دیگر عہدیدار محمد سلیم، مشتاق خان، عبداللہ، مدثر شاہ، مدد خان، جعفر شاہ، فرمان عمر زئی،یوسف خان،شکیل خان، اعظم خان، عطاء محمد، انور شاہ باچا، ملک سلیم، گل تاج، رحسار علی، سرتاج خان، جمال شاہ اور دیگر عہدیداروں نے قومی وطن پارٹی سے مستعفی ہو کر تحریک انصاف میں باقاعدہ شمولیت کا اعلان۔ 

مزید : صفحہ اول