صفائی کا ناقص انتظام

صفائی کا ناقص انتظام

  

مکرمی! تحصیل میونسپل کارپوریشن سیالکوٹ کی یونین کونسل امام صاحب میں صفائی و ستھرائی کا نظام مفلوج ہوکر رہ گیا ہے۔ گٹروں سے سیوریج کا بدبودار پانی متعدد مقامات پر ہمہ وقت ابلتا رہتا ہے جبکہ گلیوں اور بازاروں میں جابجا اور ہر وقت کوڑا کرکٹ اور گندگی کا شدید احتمال ہے اس ضمن میں بڈھی بازار، بیرون مین گیٹ، دربار حضرت امام صاحب، امام صاحب روڈ کی نالیاں نزد گلی جنرل (ر) راحت لطیف، گلی سجادہ نشیناں، امام علی الحق سکول کے متصل سڑک کنارے کی صورتحال انتہائی تباہ کن ہے جس کی بنا پر وہاں سے گزرنے والوں کو شدید پریشانی کا سامنا کرنا پڑتا ہے اور کوڑا کرکٹ اور گندگی کی غلیظ بدبو سے دل خراب ہو جاتا ہے۔ سیوریج کے نظام کی تباہ حالی کی بنا پر گٹروں اور نالیوں کا پانی سڑکوں اور گلیوں میں بہنے سے وہاں سے گزرنے میں پریشان ہونا پڑتا ہے اور ٹریفک میں تعطل پایا جاتا ہے۔ یاد رہے کہ گزشتہ بلدیاتی انتخابات میں یونین کونسل امام صاحب میں مسلم لیگ (ن) کے تمام امیدواران کامیاب ہوگئے تھے مگر افسوس کہ برسر اقتدار پارٹی میں ہونے کے باوجود یہ منتخب اراکین اپنی یونین کونسل میں صحت و صفائی کے نظام کی اصلاح میں بری طرح ناکام ثابت ہوئے ہیں جس کی بنا پر علاقہ کے عوام ان سے سخت مایوس ہوچکے ہیں۔ وزیراعلیٰ پنجاب میاں محمد شہباز شریف ذاتی دلچسپی کا مظاہرہ کرتے ہوئے اصلاح احوال میں اپنا بنیادی کردار ادا کریں۔ یہ کہنا بے جا نہ ہوگا کہ یونین کونسل امام صاحب کے تمام نومنتخب اراکین عوامی توقعات پر پورا اترنے میں یکسر طور پر ناکام ثابت ہوئے ہیں اور یہ امر ایم این اے خواجہ محمد آصف (وزیر دفاع، پانی و بجلی) اور ایم پی اے منشاء اللہ بٹ (صوبائی وزیر بلدیات پنجاب) کیلئے لمحہ فکریہ کی حیثیت رکھتا ہے۔ (ابوسعدیہ سید جاوید علی شاہ امامی، 29/278 امام صاحب، سیالکوٹ)

مزید :

اداریہ -