ایک کلو کی زندہ مرغی کی فروخت پر پابندی لگائی جائے،واحد کاشمیری

ایک کلو کی زندہ مرغی کی فروخت پر پابندی لگائی جائے،واحد کاشمیری

  

لاہور(پ ر) ہوٹل اینڈ ریسٹورنٹ ایسو سی ایشن کے اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ ایک کلو کی زندہ مرغی کا گوشت ذبح کرنے کے بعد تقریباً آدھا کلو رہ جاتا ہے جو کہ حفظان صحت کے اصول کے مطابق کھانے کے قابل نہیں ہوتا ۔یہ عوام کے ساتھ سراسر زیادتی ہے ۔ ہوٹل اینڈ ریسٹورنٹ ایسو سی ایشن کے چیئرمین واحد کاشمیری نے وزیر اعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف اور ڈائریکٹر فوڈ اتھارٹی نورالامین مینگل سے مطالبہ کیا ہے کہا ایک کلو کی زندہ مرغی کی فروخت کی اجازت کے فیصلے پر نظر ثانی کی جائے ۔انہوں نے کہا کہ 1200سے 1300گرام زندہ مرغی کا گوشت 900گرام پایا جاتا ہے اس وزن کی مرغی حفظان صحت کے اصولوں کے مطابق ہو گی۔واحد کاشمیری نے کہا کہ روزانہ صبح سورج نکلنے سے پہلے ٹولنٹن مارکیٹ میں کھلے عام زندہ مرغی فروخت ہوتی ہے ۔انہوں نے فوڈ اتھارٹی کے اعلیٰ حکام سے اپیل کی کہ ایک کمیٹی بنائی جائے جس میں ٹولنٹن مارکیٹ کے عہدیدار،فوڈ اتھارٹی کے افسر اور ہوٹل اینڈ ریسٹورنٹ ایسو سی ایشن کے نمائندہ شامل ہوں جس کے زیر نگرانی زندہ مرغی کو فروخت کیا جائے اور ایسے غلط اور گھناؤنے کاروبار کرنے والے عناصر کے خلاف کارروائی کی جائے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -