داعش اورکزئی ایجنسی کے دہشت گردوں پر مشتمل گروہ ہے، نیٹوکمانڈر

داعش اورکزئی ایجنسی کے دہشت گردوں پر مشتمل گروہ ہے، نیٹوکمانڈر

  

واشنگٹن (این این آئی) افغانستان میں امریکی ونیٹو افواج کے کمانڈر جنرل جان نکولسن نے کہا ہے کہ اورکزئی ایجنسی میں ایک نئے مشترکہ دہشت گرد گروپ کی تشکیل اور لڑائی کیلئے تحریک طالبان پاکستان (ٹی ٹی پی) کے دہشت گرد داعش کو بنیاد فراہم کر رہے ہیں۔ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ افغانستان میں موجود داعش ، دراصل بنیادی طور پر افغانستان اور پاکستان میں موجود دہشت گردوں پر مشتمل ایک گروپ ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ ان دہشت گردوں کی بنیادی رکنیت پاکستان حکومت کے خلاف بننے والے دہشت گرد گروپ ٹی ٹی پی کی ہے۔ جنرل نکولسن نے بتایا کہ اورکزئی ایجنسی کے ٹی ٹی پی ارکان نے بعد ازاں داعش خراسان میں شمولیت اختیار کی ، جس کے بعد ابتدائی جنگجو گروپ بنایا گیا ، جو بعدازاں افغانستان کے صوبے ننگرہار منتقل ہونے کے بعد وہاں کے 11 اضلاع تک پھیل گیا۔ ان کا کہنا تھا کہ داعش میں شمولیت اختیار کرنے والوں کی اکثریت پاکستانی طالبان ٹی ٹی پی کے ارکان کی ہے۔انہوں نے کہا کہ پاک ، افغان خطہ دہشت گردی کیلئے زرخیز خطے کی اہمیت رکھتا ہے۔ امریکا کی جانب سے نامزد کئے گئے دنیاکے 98 دہشت گرد گروپوں میں سے 20 دہشت گرد گروپ 3 متعدد انتہا پسند تنظیموں ساتھ پاک افغان خطے میں کام کر رہے ہیں۔

نیٹوکمانڈر

مزید :

علاقائی -