حکمرانوں کو پورے پنجاب میں مزاحمت کا سامنا ہے: پرویز الٰہی

حکمرانوں کو پورے پنجاب میں مزاحمت کا سامنا ہے: پرویز الٰہی

  

گجرات (بیورورپورٹ)پورے پنجاب میں اس وقت موجودہ حکمرانوں کے خلاف مزاحمت ہے چاہے وہ کسی بھی طبقے سے تعلق رکھتا ہو ضلع کونسل میں اپوزیشن کو زندہ رکھنا بہت ضروری ہے تمام اپوزیشن جماعتیں جتنا اکٹھا ہو کر ان کا مقابلہ کریں گی اتنا ہی گجرات کی بہتری ہو گی اور عوام ہمیں کریڈٹ دے گی کہ ان کے مسائل پر کوئی بات کرنے والا موجود ہے ورنہ چیئرمین گجرات اور ان کے ساتھی عقل سے پیدل ہیں ان خیالات کا اظہار سابق نائب وزیراعظم چوہدری پرویزالٰہی نے ظہور الٰہی ہاؤس میں منتخب بلدیاتی نمائندوں کے مشترکہ اجلاس سے خطاب کر رہے تھے چوہدری پرویزالٰہی نے مسلم لیگی نمائندوں اور کارکنوں کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ آپ نے بہت جوانمردی اور دلیری سے ان ظالم حکمرانوں کے خلاف الیکشن لڑا ہے، گجرات کے عوام نے کھل کر ہماری پارٹی کا ساتھ دیا ہے، ہر ایک کی دعائیں آپ کے ساتھ ہیں، ہار جیت تو سیاست کا حصہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ جس طرح ہارس ٹریڈنگ کر کے یہ چیئرمین بنے ہیں عوام کے سامنے عیاں ہے اس سے گجرات کے عوام کا کوئی فائدہ نہیں ہو گا، یہ جیت کر بھی ہار گئے ہیں جو کریڈٹ ہمیں ہار کر ملا ہے شاید جیت کر بھی نہ ملتا، 8 ووٹوں کا فرق کوئی بڑی بات نہیں انہوں نے کہا کہ اپوزیشن لیڈر کیلئے ہم نے چیئرمین غلام رسول شارق ایڈووکیٹ اور ڈپٹی اپوزیشن لیڈر کیلئے نعمان اشرف ایڈووکیٹ اور توصیف لیاقت ایڈووکیٹ کا نام دیا ہے ایک ماہ بعد ضلعی حکومت کا اجلاس ہو گا اس سے پہلے تمام اپوزیشن جماعتوں سے رابطہ رکھیں ظہور الٰہی ہاؤس میں اجلا س کے شرکا کی شکایات سنتے ہوئے چوہدری پرویز الٰہی کا کہنا تھا کہ کوئی ہمارے ساتھیوں کو تنگ کرے یہ ہمارے لئے ناقابل برداشت ہے جہاں رولز کی خلاف ورزی ہوتی ہے وہاں تو سرپرستی کی جاتی ہے لیکن جو لوگ رولز کی پابندی کرتے ہیں انہیں تنگ کرکے حکومتی جماعت کے سامنے نمبر بنائے جاتے ہیں جو انتقامی کاروائی ہے رائل میرج ہال کو خصوصی طور پر نشانہ بنایا جارہا ہے جس کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے جس بھی میرج ہال پر چھاپہ مارا جاتا ہے خلاف ورزی کی صورت میں میرج ہال کے منیجر پر مقدمہ بنایا جاتا ہے مگر رائل میرج ہال پر چھاپہ مار کر مالک پرجھوٹا مقدمہ بنانا اور انہیں حوالات میں بند کرنا انتقامی کاروائی کے سوا کچھ نہیں میں انتظامیہ کو تنبیہ کرتا ہوں کہ وہ اپنے فرائض تک محدود رہے اور شاہ سے زیادہ شاہ کی وفادار بننے سے گریز کرے چوہدری مظہرعلی نت قانون کی پاسداری کرنے والے ہیں انہیں میرا ساتھی ہونے کی وجہ سے جو تنگ کررہے ہیں میں انہیں بھولنے والا نہیں اپنے ساتھیوں کا تحفظ کرنا مجھے آتا ہے انتظامیہ آئندہ غیرقانونی حرکات سے باز رہے۔

مزید :

علاقائی -