پنجاب میں شہریوں کو معیاری بنیادی سہولتوں کی فراہمی

پنجاب میں شہریوں کو معیاری بنیادی سہولتوں کی فراہمی
 پنجاب میں شہریوں کو معیاری بنیادی سہولتوں کی فراہمی

  

یہ کہاں کا انصاف ہے کہ اس ملک کی اشرافیہ کو تو تمام سہولتیں دستیاب ہوں، جبکہ عام آدمی بنیادی سہولتوں کے لئے بھی مارا مارا پھرے۔ ہمیں اس تفاوت کو ختم کرنا ہے۔

ملک میں خونیں انقلاب روکنے کا واحد راستہ یہی ہے کہ وسائل کی منصفانہ تقسیم یقینی بنائی جائے اور امیر و غریب کے درمیان خلیج کو کم کیا جائے۔۔۔ محکمہ منصوبہ بندی و ترقیات کے زیراہتمام 2 روزہ ’’پنجاب ہیومن ڈویلپمنٹ فورم 2018ء‘‘ کے افتتاحی سیشن سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعلیٰ شہباز شریف نے کہا کہ انسانی وسائل کی ترقی کے بغیر معاشی اہداف کا حصول ممکن نہیں ہے۔

اعلیٰ معیار کی ہیومن ریسورس معاشی و سماجی ترقی میں کلیدی کردار ادا کرتی ہے۔ پنجاب حکومت نے ہیومن ریسورس ڈویلپمنٹ پر خصوصی توجہ مرکوز کی ہے۔ صوبے کے ہر بچے، ماں، باپ اور ہر شہری کو معیاری بنیادی سہولتوں کی فراہمی ہمارا مشن ہے اور اس مشن کی تکمیل تک چین سے نہیں بیٹھیں گے۔

وزیراعلیٰ نے کہا کہ میرے لئے اس انتہائی اہم فورم میں شرکت باعث مسرت ہے اور یہ فورم انسانی وسائل کی ترقی کے حوالے سے سودمند ثابت ہوگا۔

پنجاب حکومت نے تعلیم، صحت، فنی تعلیم، انفراسٹرکچر، پبلک ٹرانسپورٹ اور دیگر سماجی شعبوں کی ترقی کے لئے جامع حکمت عملی اپنائی ہے اور صوبے میں اچھے طرز حکمرانی کو فروغ دیا ہے۔

شہباز شریف نے کہا:شہریوں کو صاف پانی کی فراہمی ایک بڑا چیلنج ہے اور ہم نے صوبے کے ہر شہری کو پینے کے صاف پانی کی فراہمی کا عزم کر رکھا ہے۔

اس مقصد کے لئے ہم نے ایک بڑا پروگرام شروع کیا ہے، تاہم اس میں ہمیں مشکلات کا سامنا کرنا ہے اورہمیں اس پروگرام میں دھچکا بھی لگا۔ فلاح عامہ کے منصوبوں کو نتیجہ خیز بنانے کے لئے کوالٹی ہیومن ریسورس ضروری ہے۔

ہمیں اپنی غلطیوں اور خامیوں کو تسلیم کر کے آگے بڑھنا ہے، کیونکہ غلطیوں سے سبق حاصل کرکے آگے بڑھنے سے ہی مثبت نتائج ملتے ہیں، لیکن بدقسمتی سے ماضی کی حکومتیں گزشتہ 70 سال سے ’’سب اچھا‘‘ کا راگ الاپتی رہی ہیں اور حقائق کو نظرانداز کیا گیا ہے، دعوے کئے گئے کہ یہاں دودھ اور شہد کی نہریں بہہ رہی ہیں۔

ماضی کی حکومتوں کے ایسے غلط اور بلند بانگ دعووں نے اس قوم کے اعتماد کو بے پناہ ٹھیس پہنچائی ہے۔ موجودہ حکومت نے ملک کو درپیش مسائل سے نجات دلانے کے لئے سنجیدہ کاوشیں کیں جو بارآور ثابت ہوئیں۔ اپنے وسائل سے 5 ہزار میگاواٹ بجلی کے منصوبے ریکارڈ مدت میں مکمل کئے گئے ہیں۔

ہم نے یہ منصوبے ورلڈ بینک یا ایشیائی ترقیاتی بینک سے قرضے لے کر نہیں لگائے، بلکہ پاکستان کے عوام کے خون پسینے کی کمائی سے لگائے ہیں۔ جس تیز رفتاری اور شفافیت سے بجلی کے منصوبے مکمل کئے گئے ہیں، اس کی ملک اور دنیا کی تاریخ میں کوئی مثال نہیں۔

دنیا میں کہیں بھی اتنی تیزرفتاری کے ساتھ بجلی کے منصوبوں کو مکمل نہیں کیاگیا جس تیزی سے ہماری حکومت نے ان منصوبوں کو مکمل کیا۔شہباز شریف کا کہنا تھا کہ قومی عزم اور متحدہ کاوشوں کی ایک اور مثال پاکستان کا ایٹمی قوت بننا ہے۔

ہم نے نیوکلیئر طاقت کسی جارحیت کے لئے نہیں، بلکہ دفاعی مقاصد کے لئے حاصل کی ہے اور یہ بھی پوری قوم کی انتھک محنت کا نتیجہ ہے۔ اسی عزم اور جذبے سے کام کیا جائے تو کوئی چیلنج چیلنج نہیں رہے گا۔

ہمیں بھکاری پن سے بھی نجات مل جائے گی اور پاکستان بین الاقوامی برادری میں باوقار مقام حاصل کرلے گا۔ ہم امداد دینے والے ملک بن جائیں گے اور اپنی منزل کا خود تعین کرسکیں گے۔

ہم نے اپنی غلطیوں سے سبق سیکھنا ہے اور کارکردگی کو مزید بہتر بنانا ہے ۔اسی طرح ہم خونیں انقلاب کو نرم انقلاب میں بدل سکتے ہیں۔یہ قائد ؒ کا پاکستان نہیں کہ امیر کے پاس ہر سہولت موجود ہو اورغریب علاج کے بغیر دنیا سے چلا جائے۔

اگر ہم نے اس نظام کو نہ بدلا تو پھر خونیں انقلاب کو کوئی نہیں روک سکتا۔ پاکستان کے قیام کا مقصد یہاں یکساں نظام کا نفاذ تھا اور اسی مقصد کے لئے ہمارے آباؤ اجداد نے قربانیاں دی تھیں۔ فلاحی منصوبو ں کے لئے ہمیں اپنے وسائل خود پیدا کرنا ہیں اور ہمیں اتحاد کی قوت سے خودانحصاری کی منزل کی جانب بڑھنا ہے۔۔۔یہ حقیقت ہے کہ پنجاب میں عوام کی فلاح و بہبود کے لئے متعدد منصوبوں پر تیزی سے کام ہو رہا ہے۔

پنجاب حکومت نے شفافیت ، اعلیٰ معیار اور تیز رفتاری سے منصوبوں کی تکمیل کے کلچر کو پروان چڑھایا ہے۔حکومت کی شفاف پالیسی کا اعتراف نہ صرف ملکی، بلکہ بین الاقوامی ادارے بھی کر رہے ہیں۔

پنجاب حکومت دیہی اور شہری علاقوں کے لئے ترقی کی متوازن پالیسی پر عمل پیرا ہے۔دیہی سڑکوں کی تعمیر و بحالی کے بڑے منصوبے پر تیز رفتاری سے کام ہو رہا ہے۔

تعلیم و صحت کی سہولتوں کی بہتری اور پینے کے صاف پانی کی فراہمی کے لئے اربوں روپے کے منصوبوں پر کام ہو رہا ہے اورفلاح عامہ کے منصوبوں کو اعلیٰ معیار کے ساتھ مکمل کیا جا رہا ہے۔

مزید :

رائے -کالم -