خطہ پوٹھوار کے کاشتکار اصلاح آبپاشی کی سکیموں سے بھرپور فائدہ اٹھائیں؛ ملک محمد اکرم

خطہ پوٹھوار کے کاشتکار اصلاح آبپاشی کی سکیموں سے بھرپور فائدہ اٹھائیں؛ ملک ...

  

راولپنڈی/ اسلام آباد (ا ین این آئی )خطہ پوٹھوار کے کاشتکار اصلاح آبپاشی کی سکیموں سے بھرپور فائدہ اٹھائیں۔ بارشی پانی کو اکٹھا کرنے کیلئے تالاب بنائے جائیں گے۔ ڈرپ اور سپرنکلر اریگیشن سسٹم وقت کی اہم ضرورت اور اس سے پانی کی بچت بھی ہوتی ہے۔ان خیالات کا اظہار ڈائریکٹر جنرل زراعت شعبہ اصلاح آبپاشی ملک محمد اکرم نے راولپنڈی ڈویژن کے دورہ کے دوران کیا۔ دورہ کے دوران انہوں نے اصلاح آبپاشی کی مختلف سکیموں کا معائنہ کیا۔ اس موقع پر ڈائریکٹر راولپنڈی ڈویژن انجینئر محمد اقبال اور ڈپٹی ڈائریکٹر چوہدری عبدالستار بھی ان کے ہمراہ تھے۔انہوں نے راولپنڈی کے گاؤں جاوا داخلی علاقہ ڈاوری کا دورہ کیا اور یہاں پر بننے والے تالاب کے تعمیراتی کام کا جائزہ لیا۔ یوا ین پی کے مطابق اس موقع پر انہوں نے کہا کہ خطہ پوٹھوار میں بارشی پانی کو اکٹھا کرنے کیلئے 100 تالاب بنائے جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ اس منصوبے پر 50 فیصد پر سبسڈی دی جا رہی ہے جو کہ کاشتکاروں کے لئے فائدہ حاصل کرنے کا بہت ہی سنہری موقع ہے۔ اس سکیم سے تقریباً 1000 ایکڑ سے زائد بارانی رقبہ کو سیراب کیا جا سکے گا۔ بعد ازاں انہوں نے اسی علاقے میں لگی ہوئی ٹنل کا بھی دورہ کیا اور معائنہ کے دوران کام کی تعریف کی ۔ اس موقع پر ڈپٹی ڈائریکٹر اصلاح آبپاشی چوہدری عبدالستار نے بریفنگ دی ۔ ڈائریکٹر جنرل نے سولر سسٹم سے منسلک ڈرپ نظام آبپاشی کے معائنہ کے دوران اطمینان کا اظہار کیا۔ اس موقع پر انہوں نے کہا کہ پانی بنیادی اہمیت کا حامل ہے اور اس کے باکفایت استعمال کا حل ڈرپ نظام آبپاشی ہی ہے۔ بعد ازاں انہوں نے ضلع چکوال کے گاؤں چک کوکا میں لگی سکیموں کا دورہ کیا اور اطمینان کا اظہار کیا۔ دورہ کے دوران انہیں سولر سسٹم اور ڈرپ نظام آبپاشی پر لگے ہوئے آڑو اور زیتون کے نئے باغات دکھائے گئے۔ ملک محمد اکرم نے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ سولر سسٹم سے بجلی بنانا انتہائی سستا اور ماحول کیلئے انتہائی سود مندہے۔ اس موقع پر کاشتکاروں نے حکومت پنجاب کی طرف سے شعبہ اصلاح آبپاشی کی جاری سکیموں کو سراہا۔

مزید :

کامرس -