نیب کے وزارت داخلہ کو خط عمل درآمد کے جائے ، نواز شریف اور مریم کا نام ای سی ایل میں ڈالا جائے : خورشید شاہ

نیب کے وزارت داخلہ کو خط عمل درآمد کے جائے ، نواز شریف اور مریم کا نام ای سی ...

  

اسلام آباد (آن لائن) پاکستان پیپلزپارٹی نے نیب کی جانب سے نواز شریف ‘ مریم نواز اور کیپٹن (ر) صفدر کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کے خط کے بعد عمل درآمد کامطالبہ کردیا۔ قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر سید خورشید شاہ نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ وزارت داخلہ نیب کی جانب سے نواز شریف اور دیگر کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کے خط پر فوری طور پر عمل درآمد کرنا چاہیے انہوں نے کہا کہ شرجیل میمن خود وطن واپس آکر عدالت میں پیش ہوئے مگر انہیں جیل بھیج دیا گیا ان کے خلاف کوئی ریفرنس بھی نہیں ہے۔ اور وہ قید ہیں جبکہ نواز شریف کے خلاف ریفرنس ہونے کے باوجود وہ آزاد ہیں قانون سب کے لئے برابر ہونا چاہیے انہوں نے کہا کہ فرق رکھا جائے گا تو اس کے نتائج صحیح نہیں ہوں گے ۔ 2014 ء میں مسلم لیگ (ن) کی حکومت مشکل میں آئی تو ہم ساتھ کھڑے ہوئے میثاق جمہوریت کے تحت آصف علی زرداری نواز شریف کے گھر گئے اگر میثاق جمہوریت پر عمل ہوتا تو نواز شریف کو یہ دن نہ دیکھنا پڑتا میثاق جمہوریت کے تحت عدلیہ کو دو حصوں میں تقسیم ہونا تھا ایک آئینی عدلیہ اور دوسری موجودہ عدلیہ بننی تھی۔ ججز تقرری کے طریقہ کار سے متعلق اٹھارہویں ترمیم میں نواز شریف نے رکاوٹ ڈالی نیب پر متفقہ قانون بنانے کا کہا تو ن لیگ کے اپوزیشن لیڈر نے مخالفت کی انہوں نے کہا کہ میاں صاحب نے سمجھا معاملہ عدالت میں جانے سے لمبا چلے گا تو فائدہ ہوگا جو لیڈر اپنے فائدے کا سوچے وہ خود اس میں پھنس جاتا ہے انہوں نے کہا کہ میثاق جمہوریت پر عمل درآمد میں نواز شریف سب سے بڑی رکاوٹ تھے نواز شریف نے میمو گیٹ میں میثاق جمہوریت کا مذاق اڑایا۔

خورشید شاہ

مزید :

علاقائی -