عوام کو موٹر سائیکل فراہمی کے نام پر اربوں روپے سے محروم کرنے والے 2ملزمان نیب کے حوالے

عوام کو موٹر سائیکل فراہمی کے نام پر اربوں روپے سے محروم کرنے والے 2ملزمان ...

  

لاہور(نامہ نگار )احتساب عدالت میں عوام کو موٹر سائیکل فراہمی کے نام پر اربوں روپے سے محروم کرنے والے ملزمان کے کیس کی سماعت ہوئی فاضل جج نے دو مزید ملزمان ارشد اور ملک شہبازکو 14 روزہ جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے کرتے ہوئے سماعت ملتوی کردی ۔احتساب عدالت کے جج نجم الحسن نے ملزم کو ملزمان کو 28 فروری کو دوبارہ پیش کرنے کا حکم دیا ہے ۔عدالت کو بتایا گیا کہ 2017 میں ایم این ایم نامی کمپنی کھولی گئی ،بعد ازاں فیصل آباد، جھنگ، ساہیوال، سرگودھا، ملتان، لیہ ،چیچہ وطنی اور ٹوبہ ٹیک سنگھ کے علاقوں میں دفاتر کھولے گئے،نیب کے پراسیکویٹر وارث علی جنجوعہ نے بتایا کہ ملزمان 25,000 ایڈوانس وصولی پر 45 دنوں میں موٹر سائیکل فراہمی کا وعدہ کرتے،ابتدائی طور پر 20,000 موٹر سائیکل تقسیم کئے گئے،پھرغائب ہوگئے ۔نیب کو SECP کی جانب سے ستمبر 2017 ء میں ملزمان کے خلاف شکایت درج کروائی گئیں،دوران تفتیش مختلف شہروں میں سیکڑوں دفاترا و رہزاروں ایجنٹس فعال ہونے کا انکشاف ہوا،مذکورہ کمپنی کے گرفتار سٹاک افسر ظفر اقبال سے تحقیقات میں انکشافات پر تفتیش کا دائرہ کار وسیع کیا گیا،مذکورہ کیس میں ایک لاکھ سے زائد متاثرین سے اربوں روپے لوٹے گئے ہیں جس پرعدالت نے مذکورہ بالا حکم جاری کردیا ہے ، واضح رہے کہ اس کیس میں پہلے بھی دو ملزمان احمد سیال وغیرہ نیب کی حراست میں ہیں۔

مزید :

علاقائی -